جارج فلائیڈ کیس: سابق پولیس آفیسر قاتل ثابت، کمرہ عدالت سے گرفتار

184

امریکی پولیس کے تشدد سے ہلاک ہونے والے سیاہ فارم شہری جارج فلائیڈ کے قتل میں ملوث پولیس آفیسر کو گرفتار کرلیا گیا۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق ریاست مینیسوٹا میں قتل ہونے والے سیاہ فارم شہری جارج فلائیڈ کیس کی سماعت ہوئی۔ سماعت پر قتل میں ملوث پولیس آفیسر بھی جیوری کے روبرو پیش ہوا۔

امریکی جیوری نے جارج فلائیڈ قتل کے شواہد کا جائزہ لیا اور پولیس آفیسر کو قتل میں ملوث قرار پایا۔ پولیس آفیسر پر جرم ثابت ہوتے ہی اسے جیوری سے گرفتار کرلیا گیا۔

سیاہ فام امریکی جارج فلائیڈ کےقتل کا واقعہ مئی 2020 کوپیش آیا تھا۔ ویڈیوسامنےآئی تھی جس میں سابق اہلکار نے فلائیڈ کی گردن پر گھٹنے ٹیک رکھے تھے۔ ڈیرک چاون نے فلائیڈ کی گردن پر 8 منٹ 46 سیکنڈ تک گھٹنے ٹیکے رکھے۔

طبی معائنہ کاروں کی رپورٹ کے مطابق 3 منٹ بعد فلائیڈ بےسدھ ہوگئے تھے۔واقعے کے خلاف امریکا سمیت دنیا بھر میں شدید مظاہرے ہوئے تھے۔