جوتا اتار کرمارونگا، شاہدخاقان کااسپیکر سے مکالمہ

273

اسلام آباد: قومی اسمبلی میں مسلم لیگ ن کے رہنما شاہد خاقان عباسی اور اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کے درمیان جھگڑے کے دوران سخت جملوں کا تبادلہ ہوا، خاقان عباسی نے کہا کہ جوتا اتار کر مارونگا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق گستانہ خاکوں کے معاملے پر فرانس کے خلاف قرارداد منظور ہونے کے بعد خاقان عباسی اجلاس میں گفتگو کرنے کی اجازت نہ ملنے پر اسپیکر اسد قیصر کی میز کے قریب جاکر کھڑے ہوگئے ، اسد قیصر سے تلخ کلامی کرتے ہوئے کہا کہ جوتا اتار کر مارونگا۔

اسد قیصر کہتے رہے کہ آپ اپنی کرسی پر جاکر بیٹھیں لیکن خاقان عباسی غصے میں ہونے کی وجہ سے کہتے رہے کہ بات نہیں کرنے دی جائے گی تو جوتا اتار کر مارونگا۔

خاقان عباسی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اجلا س میں بولنے کا حق ہے اگر نہیں دیا جائے گا تو جوتا مار کر لونگا، صحافی نے کہا کہ آپ سابق وزیر اعظم ہے اس طرح کی گفتگو زیب نہیں دیتی لیکن انہوں نے کہا کہ میرا غصہ حق بجانب ہے۔