وفاق سے لائنز ایریا پروجیکٹ تحویل میں لینے کا مطالبہ

22

کراچی (اسٹاف رپورٹر) وفاقی حکومت لائنز ایریا ری ڈیولپمنٹ پروجیکٹ اپنی تحویل میں لے جس کا قانونی اور اخلاقی جواز موجود ہے۔ ان تاثرات کا اظہار سابق یوسی ناظم و کے ایم سی کونسلر محفوظ النبی خان نے ایک پریس ریلیز میں کیا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ حکومت سندھ لائنز ایریا کے ازسرنو ترقیاتی منصوبے کو 40سال گزر جانے کے باوجود مکمل نہ کراسکی ہے اور محض لائنز ایریا کے ایک تہائی رقبہ پر ازسر نو ترقیاتی کام ہوئے ہیں ۔ لائنز ایریا ری ڈیولپمنٹ پروجیکٹ PC-I کے مطابق منصوبہ کی تکمیل کی میعاد 5 سال تھی جو 35 سال قبل ختم ہوچکی ہے۔ محفوظ النبی خان نے کہا کہ لائنز ایریا ری ڈیولپمنٹ پروجیکٹ اور KDA کا اسٹاف صوبائی حکومت کی سرپرستی میں گزشتہ تین دہائیوں سے کرپشن میں مصروف ہے جس کی وجہ سے منصوبے اور علاقے کے مکینوں کو ناقابل تلافی نقصان اٹھانا پڑا ہے اور لائنز ایریا کے وسائل کو بے دریغ ضائع کیا گیا ہے ۔ لائنز ایریا میں نیلامی کیلیے مختص رقبہ کو 32/32 گز کے پلاٹوں میں تقسیم کرکے سرمایہ داروں کو کروڑوں روپے کا فائدہ پہنچایا گیا ہے جبکہ پروجیکٹ کے افسران نے بھی بہتی گنگا میں خوب ہاتھ دھوئے ہیں۔