ٹی ایل پی کیخلاف کارروائی ریاستی رٹ چیلنج کرنے پر کی گئی ، عمران خان

177

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ تحریک لبیک پاکستان کیخلاف ریاستی رٹ چیلنج کرنے پر کارروائی کی گئی،  پاکسان میں کوئی بھی قانون سے بالا تر نہیں ہے۔

تفصیلات کے مطابق سوشل میڈیا پر جاری اپنے بیان میں وزیراعظم پاکستان نے کہا ہےکہ پاکستان اور دنیا بھر میں رہنے والوں کے لیے ایک بات واضح کررہا ہوں کہ جب تحریک لبیک نے تشدد کا راستہ اپنایا ، لوگوں اور سکیورٹی فورسز پر حملہ کیا تو اس کے خلاف کارروائی کی گئی۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ آزادی اظہار رائے کی آڑ میں مذہبی انتشار پھیلانے والے اخلاقیات سے عاری ہیں۔

وزیر اعظم نے اپنے پیغام میں کہا کہ جب تحریک لبیک نے ریاست کی رٹ کو چیلنج کیا تو اس کے خلاف انسداد دہشتگردی قوانین کے تحت کاروائی کی گئی، کوئی بھی قانون اور آئین سے بالاتر نہیں ۔

وزیراعظم نےٹویٹ کیا کہ تحریک لبیک کے لوگوں نے سڑکوں پر پرتشدد مظاہرے کیے اور عوام اور قانون نافذ کرنیوالوں پر حملہ کیا ہے اور جب یہ تشدد کا راستہ اپنائیں گے لوگوں اور سیکیورٹی فورسز پر حملہ کریں گے ان کے خلاف کارروائی ہوگی۔

دوسری جانب وزیراعظم نے کہا کہ دنیا بھر میں نفرت انگیزپیغامات پھیلانے والوں کےلئے بھی سزا کا یہی معیار ہونا چاہیئے  اور  بیرون ملک میں بھی انتہاپسند مسلمانوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچاتے ہیں جبکہ مسلمان حضوراکرمﷺ کاسب سے زیادہ احترام کرتے ہیں اور اسی وجہ سے ہم توہین رسالت برداشت نہیں کریں گے۔

وزیراعظم نے کہا ہے کہ مغربی حکومتوں نے ہولوکاسٹ پر منفی رویہ غیر قانونی قرار دیا تو مغربی ریاستیں توہینِ رسالت پر بھی یہی رویہ اپنائیں اور ہولوکاسٹ کی طرح نبی کریم ﷺ کی شان میں گستاخی پر سزا مقرر کریں۔