ملک میں ٹیکس ادا نہ کرنے والے کاروبار کی بھرمار ہے ،میاں زاہد حسین

81

کراچی (اسٹاف رپورٹر)ایف پی سی سی آئی کے نیشنل بزنس گروپ کے چیئرمین، پاکستان بزنس مین اینڈ انٹلیکچولز فور م وآل کراچی انڈسٹریل الائنس کے صدر اور سابق صوبائی وزیر میاں زاہد حسین نے کہا ہے کہ آمدہ مالی سال کا ٹیکس ہدف عوام کاروباری برادری اور ایف بی آر پر دبائو بڑھا دے گا اس لئے اس پر نظرثانی کی جائے۔ کورونا ذدہ معیشت چھ ہزار ایک سو ارب روپے کے ٹیکس کا بوجھ اٹھانے سے قاصر ہے جسے تسلیم کیا جائے۔ میاں زاہد حسین نے کاروباری برادری سے بات چیت کرتے ہوئے کہاکہ عوام اور کاروباری برادری اتنا ٹیکس ادا کرنے کے قابل نہیں ہے جبکہ ایف بی آر پر ہدف کے حصول کے لیے دبائو بڑھایا جائے گا جس سے اس ادارے کی کارکردگی متاثر ہو گی اور غیر حقیقت پسندانہ اہداف کے حصول کی کوشش ٹیکس گزاروں اور ایف بی آر میں مذید دوری کا سبب بنے گی جبکہ عدالتوں میں مقدمات کا ڈھیر لگ جائے گا۔