شکارپور:جتوئی قبیلے کے دو گراہوں میں تصادم ،7 افراد ہلاک

38

شکارپور (نمائندہ جسارت) شکار پور میں جتوئی قبیلے کے دو گروہوں میں مسلح تصادم کے نتیجے میں7 افراد ہلاک اور 11 زخمی ہو گئے۔ایک سال قبل شروع ہونے واlلا جھگڑا تھم نہ سکا ۔ تفصیلات کے مطابق رستم تھانہ کی حدود کچے کے علاقے میں غیرت کے معاملے پر جتوئی برادری کے دو گروہوں کمالانی اور سعد خانانی جتوئی میں گاؤں چیمن گھر پھنجا میں تصادم ہوا جس کے دوران فائرنگ کے نتیجے میں 7 افراد جاں بحق کی اور 11سے زائد زخمی ہوگئے۔ تصادم کے دوران دونوں فریقین میں فائرنگ کا سلسلہ وقفے وقفے سے آٹھ گھنٹے تک جاری رہا جبکہ علاقہ جنگ کا میدان بن گیا ۔دونوں فریقین میں فائرنگ کے باعث زخمیوں اور نعشوں کو اسپتال منتقل نہیں کیا جاسکا ہے۔ ذرائع کے مطابق تصادم کی اطلاع پولیس کو دینے کے باوجود پولیس جائے وقوع پر نہیں پہنچ سکی جس کے باعث مزید جانیں ضائع ہونے کا خدشہ موجود تھا تاہم کافی دیر بعد ایس ایس پی شکارپور کامران نواز پنجھوتا بھاری نفری کے ساتھ جائے وقوع پر پہنچ کر صورتحال پر کنٹرول کیا اور زخمیوں ، نعشوں کو پولیس کی نگرانی میں اسپتال منتقل کیا ۔ تصادم کے دوران ہلاک ہونے والے افراد میں بخشل، راونت،حضور بخش، رمضان، نواب، شہزادو، ممتاز شامل ہیں۔ واضح رہے سیاہ کاری کے معاملے پر ایک خاتون سمیت 9 افراد قتل ہوچکے ہیں۔ ایس ایس پی کامران نواز پنجھوتا نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چار افراد کی ہلاکت اور سات افراد زخمی ہونے کی تصدیق کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کچے کا علاقہ جو ڈاکوؤں کی آماجگاہ کہلاتا ہے، یہاںپر سکھر، گھوٹکی، کشمور اور شکارپور پولیس کے مشترکہ آپریشن کی ضرورت ہے۔