دوست ہوں دوست ہی رہنے دیں: جہانگیر ترین

156

پاکستان تحریک انصاف کے سینئر رہنما جہانگیر ترین کا کہنا ہے کہ میری وفاداری کا امتحان لیا جا رہا ہے، دوستی کو دشمنی کی جانب دھکیلا جا رہا ہے۔ دوست ہوں دوست ہی رہنے دیں۔

لاہور میں  بینکنگ کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے جہانگیر ترین نے کہا کہ ملک میں 80 شوگر ملز ہیں لیکن انہیں صرف جہانگیر ترین نظر آرہا ہے۔ میرے اور بیٹے کی اکاؤنٹس منجمد کیے جا رہے ہیں۔

جہانگیر ترین نے کہا کہ تحریک انصاف سے انصاف مانگ رہے ہیں۔ وقت آگیا ہے کہ انتقامی کارروائی کو بےنقاب کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف میں شامل ہوں اور رہوں گا، میری راہیں تحریک انصاف سے جدا نہیں ہوئی ہیں۔

جہانگیر ترین نے کہا کہ کون لوگ ہیں جنہوں نے مجھے خان صاحب سے دور کردیا؟ میری وفاداری کا امتحان لیا جا رہا ہے، یہ کیا ہو رہا ہے؟ میں تو دوست تھا، دشمنی کی طرف کیوں دھکیل رہے ہو۔

دوسری جانب بینکنگ کورٹ نے جہانگیر ترین اور علی ترین کی ضمانت میں10 اپریل تک توسیع کردی۔