سندھ حکومت کا ہر قسم کی منشیات کیخلاف کریک ڈاؤن کرنے کا فیصلہ

197

کراچی: سندھ حکومت نے آئس، کرسٹل، شیشہ اور کوکین نشے کیخلاف کریک ڈاؤن کا فیصلہ کرلیا ہے اور کہا ہے کہ سینتھک اور نان سینتھک نشہ سوسائٹی کیلئے خطرناک ہیں۔

تفصیلات کے مطابق مشیرقانون مرتضی وہاب نے آئس، کرسٹل، شیشہ اور کوکین نشے کیخلاف کریک ڈاؤن کے حوالے سے محکمہ داخلہ سندھ ، ڈی جی رینجرز، ریجنل ڈائریکٹراینٹی نارکوٹکس اور آئی جی سندھ کوخط لکھ دیا ہے۔

مشیرقانون نے خط میں کہا ہےکہ سینتھک اور نان سینتھک نشے سوسائٹی کیلیے خطرناک ہیں، ان سے متعلق سیکیورٹی اداروں کوکاروائی کیلئے قانون کی ضرورت تھی۔

مرتضی وہاب نے خط میں لکھا ہے کہ کنٹرول آف نارکوٹکس ایکٹ میں ترمیم کی گئی ہے اور 12فروری کو اس ایکٹ کانوٹیفکیشن بھی جاری کیاگیا تھا۔

خیال رہے ایکٹ میں ترمیم کرکے سزائیں اورجرمانے کاتعین کردیا گیاہے جبکہ سندھ میں منشیات کی نقل وحرکت کو روکنے کیلیے سخت اقدامات کیے جائیں۔

یاد رہے رواں سال جنوری میں سندھ اسمبلی نے آئس کو منشیات قرار دیتے ہوئے خرید و فروخت اور استعمال پر پابندی اور سزاؤں کا بل منظور کرلیا تھا جبکہ آئس استعمال اور فروخت کرنے والے کوعمر قید اور 10 لاکھ روپے کا جرمانہ بھی عائد کیا گیا ہے۔