کراچی: بھارتی طیارے کی ہنگامی لینڈنگ

184

کراچی: شارجہ سے بھارتی شہر لکھنؤ جانے والے انڈین ایئر لائنز کے ایک  طیارے کے مسافر کی اچانک طبیعت خراب ہونے پر جہاز کو ہنگامی طور پر کراچی اتار لیا گیا جبکہ 67 سالہ مسافر کی موت  جہاز میں ہی ہوچکی تھی۔

سول ایوی ایشن ترجمان کے مطابق شارجہ سے بھارتی شہر لکھنؤ جانے والی انڈیگو ایئر لائن کی فلائٹ نمبر آئی جی او 1412 صبح 4 بجے جونہی ایران کے راستے پاکستانی حدود میں داخل ہوئی تو جہاز میں سوار ایک مسافر کی طبیعت خراب ہو گئی۔

کپتان کی جانب سے ایئر ٹریفک کنٹرول سے رابطہ کیا گیا اور انسانی ہمدردی کی بنیاد پر جہاز کو کراچی ایئر پورٹ اتارنے کی اجازت مانگی گئی، جس پر انسانی ہمدردی کی بنیاد پر اتھارٹیز کی جانب سے اجازت ملنے پر طیارے نے صبح 5 بجے ہنگامی طور پر کراچی کے جناح انٹرنیشنل ایئر پورٹ پر لینڈ کیا۔

سول ایوی ایشن کے مطابق ابتدائی ہنگامی طبی امداد دیے جانے تک 67 سالہ مسافر حبیب الرحمٰن جہاز میں ہی انتقال کر چکے تھے، بعد ازاں ڈاکٹر کی جانب سے موت کی تصدیق اور دستاویزی کارروائی اور ضروری اقدامات کے بعد فلائٹ نمبر آئی جی او 1412 صبح 8 بج کر 36 منٹ پر کراچی سے احمد آباد کے لیے روانہ ہو گئی۔

یاد رہے گذشتہ سال نومبر میں بھی ریاض سے دہلی جانے والی بھارتی ایئرلائن کے طیارے کو دوران پرواز مسافر کے جاں بحق ہونے پر کراچی ایئرپورٹ پر ہنگامی لینڈنگ کرنا پڑی تھی۔

سول ایوی ایشن کا کہنا تھا کہ گو ایئر کی فلائٹ کو انسانی بنیادوں پر لینڈنگ کی اجازت دی گئی تھی اور طبی معائنے کے بعد ڈاکٹرز نے مسافر محمد نوشاد کی موت کی تصدیق کی تھی جبکہ ڈاکٹر کے مطابق مسافر کی موت حرکت قلب بندہونے کے باعث ہوئی تھی۔