اٹارنی جنرل آف پاکستان میں نئے وائرس سارس کووڈ ٹو کی تشخیص

158

اسلام آباد: ملک بھر میں کورونا کا وار جاری ہے اور اسی وبا میں اٹارنی جنرل آف پاکستان مبتلا ہوگئے ہیں جبکہ گزشتہ دونوں علامات ظاہر ہونے پر ٹیسٹ کروایا گیا تھا جو ٹیسٹ مثبت آگیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اٹارنی جنرل خالد جاوید کا کرونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے جبکہ علامات ظاہر ہونے پر انہوں نے اپنا کرونا ٹیسٹ کرایا جس کی رپورٹ مثبت آگئی ہے اور تشویشناک بات یہ ہے کہ اٹارنی جنرل میں پاکستان میں وارد ہونے والے نئے وائرس سارس کووڈ ٹو کی تشخیص ہوئی ہے۔

کورونا مثبت آنے کے بعد اٹارنی جنرل نے خود کو آئسولیٹ کرلیاہے اور ڈاکٹرز ان کی دیکھ بھال کررہے ہیں جبکہ نئے وائرس سارس کووڈ-2 کی تشخیص کے بعد  داکٹرز نے این سی او سی رپورٹس سے آگاہ کردیا  ہے۔

دوسری جانب اوپن بیلٹ کے ذریعے سینیٹ انتخابات کرائے جانے کے ریفرنس پر چیف جسٹس کی سربراہی میں سپریم کورٹ کا 5 رکنی بنچ پیر کو اپنی رائے کھلی عدالت میں سنائے گا اور اس حوالے سے اٹارنی جنرل ،چیئرمین سینیٹ، اسپیکر قومی اسمبلی اور تمام ایڈووکیٹ جنرلز سمیت دیگر اہم شخصیات اور اداروں کو نوٹسز جاری کیے جاچکے ہیں۔

یاد رہے وزارت قومی صحت نے ملک میں کورونا وائرس ٹو کی موجودگی کی تصدیق کرتے ہوئے کہا تھا کہ ملک میں سارس کوویڈ 2 وائرس کے کیس سامنےآئے ہیں اور ملک میں کوروناوائرس کی نئی قسم شدت والی نہیں تاہم شہری کورونا گائیڈ لائنز سمیت ایس او پیز پرسختی سےعمل کریں۔

وزارت قومی صحت کا کہنا ہے کہ 92 ممالک میں سارس کوویڈ ٹو نامی وائرس پایا گیا ہے اور سارس کوویڈٹو وائرس پہلی بار برطانیہ میں سامنے آیا تھا جبکہ وزارت صحت کے ترجمان کا کہنا تھا کہ وزارت قومی صحت کرونا وائرس ٹو پر گہری نظر رکھے ہوئےہے اور جدیدسرویلنس سسٹم سےکورونا وائرس ٹوکی مانیٹرنگ جاری ہے۔