ملکی معیشت کو مسلسل دوسرے ماہ بھی تجارتی خسارے کا سامنا

31

کراچی ( اسٹاف رپورٹر) جنوری 2021 کے دوران جاری کھاتے کو 22 کروڑ 90 لاکھ ڈالر خسارے کا سامنا رہا،اس طرح مسلسل دوسرے ماہ ملک کو تجارتی خسارے کا سامنا کرنا پڑا ہے۔اسٹیٹ بینک کے مطابق دسمبر 2020 کے مقابلے میں جنوری 2021 کا خسارہ 42 کروڑ 30 لاکھ ڈالر کم رہا۔ رواں مالی سال کے پہلے سات ماہ میں کرنٹ اکانٹ بیلنس 91 کروڑ 20 لاکھ ڈالر سرپلس رہا۔ گزشتہ مالی سال کے اسی عرصے میں جاری کھاتے کو 2 ارب 54 کروڑ 40 لاکھ ڈالر خسارہ ہوا تھا۔رواں مالی سال کے پہلے سات ماہ کے دوران تجارتی خسارہ 13 ارب 74 کروڑ ڈالر رہا۔ تجارتی خسارہ گزشتہ مالی سال کے اسی عرصہ کے مقابلے میں 2 ارب 14 کروڑ ڈالر زائد ہے۔ اشیا و خدمات کی تجارت کا مجموعی خسارہ 14 ارب 85 کروڑ 70 لاکھ ڈالر رہا۔گزشتہ مالی سال کے اسی عرصہ میں اشیا و خدمات کا مجموعی خسارہ 13 ارب 49 کروڑ ڈالر تھا۔ رواں مالی سال کے پہلے سات ماہ کے دوران 16 ارب 47 کروڑ 70 لاکھ ڈالر کی ترسیلات موصول ہوئیں۔ گزشتہ مالی سال کے مقابلے میں ترسیلات کی مالیت 3 ارب 20 کروڑ ڈالر زائد رہیں۔