سندھ کابینہ کا نئی گاڑیوں کی خریداری کیلیے اہم فیصلہ

140

سندھ کابینہ نےنئی گاڑیوں کی خریداری کےلیےسپریم کورٹ میں درخواست دائرکرنےکافیصلہ کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی زیرصدارت کابینہ کااجلاس ہوا جس میں  بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ سپریم کورٹ کی ہدایت پرنئی گاڑیوں کی خریداری پرپابندی عائدہے جس کی وجہ سے پولیس،ایمبولینس جیسی ضروری گاڑیاں بھی نہیں خریدپارہے۔

کابینہ نےنئی گاڑیوں کی خریداری کےلیےسپریم کورٹ میں درخواست دائرکرنےکافیصلہ کر لیا جب کہ  بورڈ کےلیےنئی گاڑیوں کی خریداری کی منظوری دے دی۔

وزیر زراعت اسماعیل راہو ن کابینہ کو بتایا کہ سندھ  میں صرف ایک کنٹرولڈ اسٹور کراچی میں ہے جس پر وزیراعلیٰ نے کہا کہ کولڈ اسٹوریج ایک بہترین بزنس ہے  حکومت صرف چھوٹے کاشتکاروں کو سبسڈی دیں،  سولر ٹیوب  ویلزکا بڑا مطالبہ ہے، اس کو سبسڈیز دینا چاہیے، کولڈ اسٹوریج پی پی پی موڈ کے تحت ڈویژنل ہیڈکواٹرز میں قائم کئے جائیں۔

کابینہ  نے  محکمہ زراعت کو لینڈ لیورز اور دیگر زرعی آلات کی اسکیمیں بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے محکمہ زراعت کو سولر ٹیوب اور زرعی آلات پر سبسڈی کی منظوری دے دی۔

کابینہ میں کوسٹل ڈولپمنٹ اتھارٹی  نے محکمہ جنگلات کی 3000 ایکڑز اراضی   کیلئے کابینہ کو درخواست دی جس پر کابینہ نے سی ڈی اے کو 3000 ایکڑز اراضی پر پام آئل کے درخت لگانے کی منظوری دے دی۔ترجمان سندھ  حکومت مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ ایک ایکڑ پر 60 پام آئل کے درخت لگائے جاسکتے ہیں۔