لاہور: ہاؤسنگ اسکیمز نے بجلی بلنگ کی مد میں لیسکو کو اربوں روپے کا چونا لگادیا

145

لاہور: صوبہ پنجاب کے شہر لاہور کی معروف ہاسنگ اسکیمز نے بلنگ کی مد میں لیسکو کو اربوں روپے کا چونا لگا دیا، ون پوائنٹ سپلائی پر ٹیرف کی خلاف ورزی کر کے سستی بجلی لیکر صارفین کو مہنگے داموں فروخت کرنے سے ایک سال کے دوران ایک ارب تئیس کروڑ روپے کا نقصان پہنچا دیا۔

ذرائع کے مطابق لاہور الیکٹرک سپلائی کمپنی کو شہر کی معروف اور بڑی پرائیویٹ ہاؤسنگ اسکیمز کی جانب سے بلنگ کی مد میں اربوں روپے کا نقصان پہنچانے کا انکشاف ہوا ہے۔ دستاویزات کے مطابق بلک سپلائی پر سستے داموں بجلی لینے والی اسکیمز نے اربوں روپے کا نقصان پہنچایا، ہاؤسنگ اسکمیز کو ون پوائنٹ سپلائی پر دی ٹو بی ٹیرف دیا گیا جس کے تحت وہ صارفین فروخت نہیں کر سکتے۔

اس طرح ٹیرف متعین نہ ہونے کی وجہ سے سستی بجلی لیکر صارفین کو مہنگے داموں فروخت کی گئی اور مہنگے داموں فروخت ہونے کی وجہ سے لیسکو کو ایک ارب تئیس کروڑ روپے کا نقصان ہوا۔ لیسکو ذرائع کے مطابق کمپنی میں ویلنشیا ٹان، ای ایم ای سوسائٹی اور ماڈل ٹان سوسائٹی نے صارفین کو مہنگے داموں بجلی فروخت کی ہے۔

پرائیویٹ ہاسنگ اسکیمز نے نیپرا قوانین کے برعکس بجلی لیکر صارفین کو فروخت کی۔رپورٹ کے مطابق ہاسنگ اسکیمز کو قوانین کے مطابق ڈسٹری بیوشن لائسنس لیکر بجلی سپلائی کرنا تھی اور جے ٹیرف کے تحت ری سیل کرنا تھی، تاہم لائسنس کے بغیر ہی سستے ٹیرف پر بجلی لے کر مہنگے داموں فروخت کی گئی۔