سہون، بیوٹیفکیشن کے نام پر کروڑوںکی کرپشن، شہر کھنڈرمیں تبدیل

12

سہون (نمائندہ جسارت) سہون بیوٹیفکیشن کے نام سے کروڑوں روپے کی کرپشن، شہر کھنڈر بن گیا، سندھ یونائیٹڈ پارٹی کی طرف سے احتجاج۔ سندھ یونائیٹڈ پارٹی ضلع جامشورو کی طرف سے دریا خان لغاری کی قیادت میں احتجاج کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ سہون جو ان دنوں بنیادی مسائل سے دو چار ہے، شہریوں کو نہ تو پینے کے پانی کی سہولت ہے، نہ ہی کوئی سوریج کا نظام، واٹر سپلائی اسکیم کی شہر بھر میں بچھائی ہوئی پانی کی لائنیں ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہیں، شہری بدبودار پانی پینے پر مجبور ہیں، شہر کی اہم سڑکیں بھی تباہ ہوچکی ہیں، ہر طرف غلاظت اور گنگی کے ڈھیر نظر آئیں گے۔ سندھ حکومت کی طرف سے ایک دہائی سے ملنے والے اربوں روپے کے عوامی بجٹ کرپشن اور ناقص تعمیراتی کام کی نظر ہوگئے، جس سے شہریوں زائرین کو کوئی سہولت نہ دے سکے۔ شہر کے تمام آر او پلانٹ بند پڑے ہیں، مگر ان کی مینٹیننس کی مد میں لاکھوں روپے دکھائے جاتے ہیں، سابق صدر مشرف کے دور کے بعد شہر میں عوامی فلاحی کام دکھائی نہیں دیتے، شہر کی حالت ابتر ہوچکی ہے، 50 برسوں سے پی پی کو ووٹ دینے والے بھٹو کے شیدائیوں کے ساتھ گزشتہ دو دہائیوں سے سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا جا رہا ہے، یہاں کے با اثر صرف سرکاری ملکیتوں کو کوڑی کے مول میں لیز میں لیکر لکھ پتی، کروڑ پتی بن گئے ہیں جبکہ شہر کی حالت زار پر کوئی توجہ نہیں دی جارہی۔ ایس یو پی کے رہنمائوں نے وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی توجہ سہون کی خستہ حالت پر مرکوز کراتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ سہون میں بیوٹیفکیشن پراجیکٹ کے نام پر ہونے والی کرپشن کو بند کیا جائے اور ملوث عناصر کو بے نقاب کرکے عوامی بجٹ عوام پر خرچ کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ سہون میں ہونے والی کروڑوں روپے کی کرپشن کیخلاف جلد سندھ ہائی کورٹ سے رجوع کیا جائے گا۔