تحریک انصاف نے جے یو آئی کیخلاف فارن فنڈنگ کیس دائر کردیا

49

اسلام آباد (آن لائن) پاکستان تحریکِ انصاف نے جمعیت علمائے اسلام (جے یو آئی ف) کے خلاف فارن فنڈنگ کیس دائر کر دیا۔پی ٹی آئی کے رہنما و پارلیمانی سیکرٹری فرخ حبیب نے اس ضمن میں جمعیت علمائے اسلام ف کے خلاف درخواست الیکشن کمیشن میں دائر کر دی۔دائر کی گئی درخواست میں جمعیت علمائے اسلام ف کے سابق رہنما حافظ حسین احمد کے ٹی وی انٹرویو کا ٹرانسکرپٹ بھی شامل کیا گیا ہے۔درخواست میں کہا گیا ہے کہ حافظ حسین احمد نے مولانا فضل الرحمان کے لیبیا اور عراق سے فنڈنگ لینے کا اعتراف کیا ہے، مولانا فضل الرحمان سمیت کئی رہنما دونوں ممالک کا متواتر دورہ کرتے تھے۔پاکستان تحریکِ انصاف نے الیکشن کمیشن سے جمعیت علمائے اسلام ف کے خلاف الیکشن ایکٹ کے خلاف کارروائی کی درخواست بھی کی ہے۔الیکشن کمیشن کے باہر پاکستان تحریکِ انصاف کے رہنما و پارلیمانی سیکریٹری فرخ حبیب نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مولانا فضل الرحمان کو فارن فنڈنگ ہوتی رہی ہے، انہوں نے ڈی آئی خان اور دیگر شہروں میں جائدادیں بنائی ہیں، فضل الرحمان بتائیں ان کو چندہ کہاں سے آیا؟انہوں نے کہا کہ حافظ حسین احمد کے انکشافات پر الیکشن کمیشن نوٹس لے، فضل الرحمان کی فارن فنڈنگ کی تحقیقات ہونی چاہیے، فارن فنڈنگ لینے والے آج اکٹھے ہو گئے ہیں، فضل الرحمان کے ہاتھ صاف ہیں تو وہ رسیدیں دیں۔ انہوں نے کہا کہ آج اکبر ایس بابر نے یو ٹرن لے کر دوبارہ کمیٹی پر اعتماد کا اظہار کیا ہے، لگتا ہے ان کا ایزی لوڈ ختم ہو گیا تھا، اب ایزی لوڈ ہو گیا تو وہ آ گئے ہیں، امید کرتا ہوں کہ اب وہ روتے ہوئے نہیں جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ حافظ حسین احمد متعدد ٹی وی شوز پر آ کر اس بات کا اعتراف کر رہے ہیں کہ مولانا فضل الرحمٰن کو فنڈنگ ہوتی رہی ہے، 19 جماعتوں کو 24 تاریخ کے لیے نوٹس جاری ہوا ہے، مولانا خان محمد شیرانی کو بھی بلا لیا جائے، مولانا فضل الرحمان کے اپنے لوگوں نے بھانڈا پھوڑ دیا ہے، مولانا کو بتانا ہو گا کہ اْن کو فنڈنگ کہاں سے ہوئی ہے۔