حقوق کراچی مہم : جماعت اسلامی کاشہر بھر میں دھرنا دینے کا اعلان

186

کراچی:امیرجماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن کا کہنا ہے کہ 30جنوری کو شہر قائد میں50سے زائد مقامات پرحقوق کراچی کے لیے دھرنے دیے جائیں گے۔

ادارہ نور حق میں ذمہ داران کا اجلاس منعقد کیا گیا، جس میں شہر کے 50مقامات پر دیئے جانے والے دھرنوں کے حوالے سے حکمت عملی طے کی گئی۔

حافظ نعیم الرحمن نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پیپلز پارٹی اور ایم کیو ایم نے مل کر کراچی کو تباہ و برباد کیا ہے ،پی ٹی آئی نے بھی ڈھائی سال میں کراچی کے لیے کچھ نہیں کیا ۔

امیر کراچی کا مزید کہنا تھا کہ مردم شماری پر اگر ایم کیوایم کو تحفظات ہیں تو حکومت سے علیحدہ کیوں نہیں ہو جاتی ، کوٹہ سسٹم میں غیر معینہ مدت تک اضافے پر ایم کیو ایم اور پی ایس پی نے خاموشی کیوں اختیار کی ہوئی ہے؟کراچی سے کسی کو بھی کوئی دلچسپی نہیں ہے ،پیپلز پارٹی 13 سال سے صوبے میں حکومت کر رہی ہے لیکن کراچی کو آج تک اس کا حق نہیں دیا گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ جماعت اسلامی کے سٹی ناظم نعمت اللہ خان نے 32 نئے کالجز بنائے ، کھیل کے میدانوں اور پارکوں کو آباد کیا ، کراچی کے لیے k-3منصوبہ مکمل کر کے K-4 منصوبہ پیش کیالیکن اس کے بعد مصطفی کمال نے ایک بھی نیا پروجیکٹ نہیں بنایا اور آج تک کراچی کے عوام پینے کے صاف پانی سے محروم ہیں۔