سینے میں جلن کا احساس ہونا، وجوہات

369

سینے میں جلن کی حساسیت کی بہت ساری ممکنہ وجوہات ہیں۔ اگرچہ یہ علامات عام طور پر تشویشناک نہیں ہوتیں لیکن یہ بعض اوقات ایک ایسی شدید حالت کی نشاندہی کرسکتی ہیں جس میں علاج کی ضرورت ہو۔

سینے میں جلن جسم کے اس حصے کے کسی بھی اعضاء اور نظام سے متعلق ہوسکتا ہے۔ اس میں پسلیاں ، پھیپھڑے ، دل ، اور غذائی نالی شامل ہیں۔ جلن کا احساس ہونا غیر معمولی بات نہیں ہے اور یہ عام طور پر کوئی سنجیدہ مسئلہ نہیں ہوتا۔ تاہم کچھ معاملات میں یہ دل کے دورے کی علامت ہوسکتی ہے۔

عام وجوہات:

دل میں جلن: محسوس ہونا دراصل تیزابیت ہوتی ہے اور یہ اس وقت ہوتا ہے جب پیٹ کا تیزاب غذائی نالی میں بڑھ جاتا ہے۔ یہ سینے ، گردن ، گلے یا جبڑے میں تکلیف دہ جلن کا احساس پیدا کرسکتا ہے۔

عام زکام ، برونکائٹس ، اور نمونیا: سینے میں انفیکشن کا سبب ہے ہیں جس سے سینے میں درد یا جلن ہوسکتی ہے۔

دمہ: ایک طویل مدتی حالت ہے۔ دمہ کے شکار افراد میں پھیپڑوں کی نالی میں جلن کا احساس ہوتا ہے۔ یہ وہ راستے ہیں جو پھیپھڑوں میں ہوا اور باہر لے جاتے ہیں۔ دمہ کا حملہ اس وقت ہوتا ہے جب نلیاں کے آس پاس کے پٹھے سخت ہوجاتے ہیں جس سے ہوا کے راستے تنگ ہوجاتے ہیں۔ اس مرض سے دوچار افراد کو سینے پر وزن محسوس ہوسکتا ہے۔