نظامِ انہضام کی سوزش، جان لیوا بھی ہوسکتی ہے

489

ہاضمے کے نظام کی اس مخصوص بیماری کو طبی اصطلاح میں crohn’s disease کہا جاتا ہے۔ یہ ایک دائمی ، یا طویل مدتی ، حالت ہے جو ہاضمہ کی سوزش کا سبب بنتی ہے۔

یہ ایک قسم کی آنتوں کی سوزش کی بیماری ہے۔ کروہن بیماری تکلیف دہ ، کمزور اور کبھی کبھی جان لیوا بھی ہوسکتی ہے۔ اس میں منہ سے لے کر مقعد تک کے راستے میں کوئی بھی حصہ متاثر ہوسکتا ہے تاہم زیادہ تر معاملات میں چھوٹی آنت کے نچلے حصے ileum متاثر ہوتا ہے۔

اس میں آنتوں کے السر ، تکلیف اور درد شامل ہیں۔ بیماریوں کے کنٹرول اور روک تھام کے مرکز CDCP کے مطابق ، کروہن بیماری ہر 100،000 میں 26-199 افراد کو متاثر کرتی ہے۔ اگرچہ یہ بیماری عام طور پر 15 سے 40 سال کی عمر کے درمیان شروع ہوتی ہے لیکن یہ کسی بھی عمر کے حصے میں ہوسکتی ہے۔

علاج: اس بیماری کا علاج تاحال کوئی بھی نہیں ہے۔ تاہم تکلیف کی شدت کو درجہ ذیل امور کی مدد سے کم کیا جاسکتا ہے:

1) سوزش اور درر کو کم کرنے کی دوائیوں کا استعمال

2) کورٹیسون (cortisone) اور اسٹیروائڈز (steroids) کا استعمال

3) اینٹی بائیوٹکس

4) اسہال اور پیٹ کے درد کو کم کرنے کی ادویات کا استعمال