کراچی پولیس: خاتون نے بیٹی کو عمارت سے پھینک کرخود بھی چھلانگ لگادی

237

کراچی کے علاقے گلشن اقبال میں گزشتہ روز عمارت سے بچی سمیت کودنے والی خاتون سے متعلق تحقیقات تا حال جاری ہیں جبکہ  ڈاکٹرز کا کہنا ہےکہ خاتون کی طبیعت ٹھیک نہیں ہے اور زخمی خاتون کو وارڈ منتقل کر دیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق  کراچی کےعلاقے گلشن اقبال میں خاتون نے دو سالہ بچی کو عمارت کی چھٹی منزل سے پھینک کر خود بھی چھلانگ لگادی جبکہ نیچے کھڑے شہریوں نے بچی کو بچالیا تاہم خاتون کی ٹانگوں پر گہرے زخم آئے۔

کراچی کے علاقے گلشن اقبال تیرا ڈی کی 6 منزلہ عمارت کی آخری منزل سے خاتون نے پہلے بچی پھینکی اور پھر خود بھی چھلانگ لگادی جبکہ عینی شاہدین کے مطابق خاتون نے پہلے بالکنی سے موبائل فون پھینکا جس سے مجمع اکٹھا ہوگیا۔

شہری خاتون کو منع کرتے رہے لیکن اس نے دو سال کی بچی کو نیچے پھینک دیا جبکہ نیچے کھڑے شہریوں نے بچی کو پکڑلیا جس کے بعد خاتون نے بالکنی سے چھلانگ لگادی، اونچائی سے گرنے کے باعث خاتون شدید زخمی ہوگئی۔

واقعے کی اطلاع ملنے پر پولیس موقع پر پہنچی اور پوچھ گچھ شروع کی تو پتہ چلا کہ کودنےوالی خاتون مریم آئس کے نشے کی عادی تھی،جس کی کچھ عرصہ قبل ہی دوسری شادی ہوئی تھی۔

پولیس کے مطابق خاتون کے شوہر سے رابطہ ہوگیا ہے جس سے مزید تفصیلات لی جا رہی ہیں اور خاتون کے بھائی یا والد میں کسی نے تا حال رابطہ نہیں کیا ہے۔

خاتون کو گھروالوں نے نشے سے روکنے کےلیے بیٹی سمیت خاتون کو کمرے میں بند کر رکھا تھا کیونکہ موقع ملتے ہی بھاگنےکی کوشش کررہی تھی جبکہ زخمی خاتون کو اسپتال منتقل کردیا گیا جہاں اسے طبی امداد دی جارہی ہے۔

 پولیس خاتون کا بیان لینے کے بعد واقعے کی نوعیت کے اعتبار سے قانونی کارروائی کرے گی جبکہ پولیس کے مطابق خاتون کی شناخت 35 سالہ مریم اور بچی کی شناخت 2 سالہ ایمان کے نام سے ہوئی ہے۔

دوسری جانب  ابتدائی تفتیش کے مطابق خاتون مالی مشکلات کا شکار تھیں اور گزشتہ 3 ماہ سے گھر کا کرایہ بھی ادا نہیں کیا گیا تھا  اور پہلے شوہر سے مزید 2 بچے ہیں جبکہ علاقہ مکینوں کا کہنا ہے کہ دوسرے شوہر سے بھی طلاق ہوگئی ہے۔

پولیس کے مطابق عمارت سے کودنے والی زخمی خاتون  نشےکی عادی تھی اور بیان دینے کی حالت میں نہیں، خاتون کا بیان تاحال نہیں لیا جاسکا۔

واضح رہے گزشتہ روز کراچی کے علاقے گلشن اقبال میں خاتون نے چوتھی منزل سے کمسن بچی کو نیچے پھینک کر خود بھی چھلانگ لگادی تھی جس کی ویڈیو سماجی ویب سائٹ پر موجود ہے ۔