جعلی ڈگری پر اسلام آباد ہائی کورٹ کی اسسٹنٹ رجسٹرار برطرف

219

اسلام آباد: اسلام آباد ہائی کورٹ کی خاتون اسسٹنٹ رجسٹرار کو جعلی ڈگری پر نوکری سے فارغ کردیا گیا۔

اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے بڑا فیصلہ سناتے ہوئے 18 گریڈ کی افسر صائمہ خان کو نوکری سے برطرف کردیا۔ ایڈیشنل رجسٹرار امتیاز احمد کی جانب سے صائمہ خان کی برطرفی کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا ہے۔صائمہ خان پر ڈگری جعلی ہونے کے الزامات لگے تھے جس پر اسلام آباد ہائی کورٹ کی انکوائری کمیٹی تشکیل دی گئی تھی۔

اس کمیٹی نے اپنی رپورٹ میں صائمہ خان کی ڈگری کو جعلی قرار دیا تھا۔ تحقیقاتی رپورٹ کی روشنی میں عدالت ان کی برطرفی کا فیصلہ سنادیا۔ خاتون افسر 10 سال تک جعلی ڈگری پر نوکری کرتی رہیں۔