ایغور مسلمانوں پر مظالم، چین نے پوپ فرانسس کے بیان کو مسترد کردیا

163

چین نے پوپ فرانسس کے چینی مسلمانوں پر حکومتی مظالم سے متعلق بیان کو مسترد کردیا۔

غیر ملکی خببرساں ادارے کے مطابق چینی مسلمانوں کے ساتھ حکومت کے ناروا سلوک سے متعلق بیان کو چینی وزارت خارجہ نے شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے اور اس الزام کو بے بنیاد قرار دیا ہے۔

چینی وزارت خارجہ کے ترجمان ژاؤ لیجیان نے میڈیا بریفنگ کے دوران پوپ فرانسس کے بیان کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ چینی حکومت نے ہمیشہ اقلیتوں کے قانونی حقوق کا یکساں طور پر تحفظ کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ سنکیانگ میں تمام اقلیتوں کو اپنے بنیادی اور مذہبی حقوق اور آزادی کا مکمل تحفظ حاصل ہے۔

 واضح رہے کہ اس سے قبل پوپ فرانسس نے پہلی بار چینی حکومت کے ستائے ہوئے ایغور مسلمانوں کا ذکر کیا تھا اور کہا تھا کہ میں اکثر روہنگیا اور چینی ایغور مسلمانوں کے بارے میں سوچتا ہوں کہ اُن پر کیسے کیسے مظالم ڈھائے گئے۔