سید شاہ مردان شاہ پاکستانی سیاست کے شہنشاہ تھے، پیر یاسر

34

سجاول (نمائندہ جسارت) میرے نانا پیر سید شاہ مردان شاہ پاکستانی سیاست کے شہنشاہ تھے ان کی پیشنگوئیاں ہمیشہ درست ثابت ہوئیں وہ محب اسلام و محب وطن لیڈر کے ساتھ ساتھ فرسٹ کلاس کرکٹر بھی تھے، پاکستان پر جب کبھی مشکل وقت آیا وہ خود بارڈپر حر فورس کی قیادت کرتے ہوئے ملکی سرحدوں کی حفاظت پر مامور رہے، وہ پاک سر زمین کے سچے سپوت، ہیرو اور فیڈریشن کی علامت تھے، وہ ہمیشہ ہمارے دلوں میں موجود رہیں گے۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ فنکشنل کے مرکزی نائب صدر پیر یاسر کا اپنے نانا حروں کے روحانی پیشوا پیر سید شاہ مردان شاہ کی 92 ویں سالگرہ کے موقع پر پیغام جاری کرتے ہوئے کیا۔ پیر یاسر کا کہنا تھا کہ میرے نانا پیر سید شاہ مردان شاہ حروں کے روحانی پیشوا کے ساتھ ساتھ پاکستانی سیاست کے پیشوا و شہنشاہ بھی تھے، ان کی پیشنگوئیاں ہمیشہ وقت نے درست ثابت کیں وہ محب وطن قائد اور فرسٹ کلاس کرکٹر بھی تھے۔ انہوں نے 65ء اور 71ء کی جنگ میں اپنے حر مجاہدین کے ہمراہ پاکستان کی سرحدوں کی حفاظت کی اور پاکستان کے سچے سپوت ہونے کا ثبوت دیا۔ انہوں نے 1954ء میں انگلینڈ سے واپس آکر اپنی آبائی زمینوں پر گھاس کی پچ بنا کر پاکستانی کرکٹرز کو پریکٹس کروائی اور سندھ کرکٹ ایسوسی ایشن کی بنیاد بھی رکھی۔ انہوں نے ہمیشہ دین اسلام کا درس دیا، یہ ہی وجہ ہے کہ آج ملک بھر میں ان کی 92 ویں سالگرہ نہایت عقیدت و احترام سے مناتے ہوئے نہ صرف کیک کاٹے جارہے ہیں بلکہ ان کی مغفرت اور بخشش کے لیے قرآن خوانیاں کرکے دعائیں مانگی جارہی ہیں۔