خادم حسین رضوی نے محمد ﷺ کی ناموس کے تحفظ کیلئے ناقابل فراموش کردار ادا کیا، سراج الحق

181

لاہور: امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے المرکز اسلامی کی مسجد میں جمعہ کے بڑےاجتماع سے خطاب کرتے ہوئے تحریک لبیک کےسربراہ علامہ خادم حسین رضوی کی دینی و سیاسی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ خادم حسین رضوی کی وفات سے ملک و قوم اور خاص طور پر دینی قوتوں کو بڑا نقصان ہوا ہے۔خادم حسین رضوی نے خاتم النبین حضرت محمد ﷺ کی ناموس کے تحفظ کیلئے ناقابل فراموش کردار ادا کیا ہے۔

 سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ اسلام انسانیت کی ترقی و خوشحالی اور فلاح کا سب سے بڑا علمبردار دین ہے،پاکستان اسلام کے نظام کے لیے حاصل کیا گیا لیکن سیکولر اور لادین عناصر نے روز اول سے ہی اسکو سیکولر ریاست بنانے کی سازشیں شروع کردیں،مثالی حکمرانی اور عوام کی خوشحالی اور ترقی کے لیے سیر ت النبی کی پیر و ی ناگزیر ہے۔

انہوں نےکہاکہ موجودہ حکومت کی معاشی پالیسیوں نے ہر پاکستانی کی مشکلات میں اضافہ کیا ہے،سودی نظام اور قرضوں کی بنیاد پر قائم نظام نے پاکستان کی معیشت کو تباہ کر دیا ہے،ملک کا تاجرخوشحال ہوگا تو عوام خوشحال ہوں گے اورروزگار کے مواقع بڑھیں گے،جماعت اسلامی دوسری جماعتوں کی طرح روایتی سیاسی جماعت نہیں۔

امیر جماعت اسلامی نےکہا کہ یہ نظام کی تبدیلی کی ایک تحریک ہے جو عوام کے بنیادی حقوق کے تحفظ اور اسلام کے عادلانہ نظام کے نفاذ کی جدوجہد کر رہی ہے،جماعت اسلامی چاہتی ہے کہ اقتدار کرپٹ اور بد دیانت لوگوں کی بجائے خوف خدا رکھنے والی عوام کی خادم قیادت کے ہاتھ میں ہو، تاکہ عوام کی ا مانتوں کے تحفظ کو یقینی بنایا جاسکے۔

انہوں نےکہاکہ ملک کو انقلاب اور انقلابی و نظریاتی قیادت کی ضرورت ہے۔ ایسی قیادت جو ملک کو عالمی مالیاتی اداروں اور امریکہ کی غلامی کے چنگل سے نکال سکے  اسلام صرف عبادات کا مذہب نہیں ہے یہ ایک تہذیب، کلچر اور معاشرے کی خوبصورتی کا نام ہے جماعت اسلامی پارٹی نہیں بلکہ خاندان ہے جوعوام کے ہر غم و خوشی میں شریک ہوتی ہے۔