پنجاب میں بند شادی ہالوں کے اندر تقریبات پر پابندی

116

لاہور: کورونا وائرس کی دوسری لہر میں تیزی کے پیش نظر پنجاب حکومت نے شادی ہالوں کے اندر تقریبات پر پابندی عائد کر دی ہے جبکہ تقریبات کی اجازت صرف کھلے مقامات پر ہوگی جہاں 300 سے زائد افراد کے اکٹھے ہونے پر پابندی ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب حکومت نے شادی ہالوں کے اندر تقریبات پر پابندی عائد کر دی ہے اور سکریٹری پرائمری اور سیکنڈری ہیلتھ کیئر کیپٹن (ر)محمد عثمان نے کورونا وائرس سے متعلق کابینہ کمیٹی کی اجازت سے نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے۔

سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئرکے نوٹیفکیشن کے مطابق شادی بیاہ اور دیگر تقریبات کی اجازت صرف کھلی جگہوں پر ہو گی جبکہ تقریبات میں زیادہ سے زیادہ 300 افراد کے اکٹھے ہونے کی اجازت ہو گی اور عوامی اجتماعات میں 300 سے زائد افراد کے اکٹھے ہونے کی اجازت نہیں ہو گی۔

کیپٹن (ر) محمد عثمان کے مطابق کھلی جگہ پر تقریبات میں ایس او پیز پر عمل درآمد کرنا لازم ہو گا اورتقریبات کے علاوہ عوامی مقامات پر چہرہ ڈھانپنا بھی لازم ہوگا اور پابندی کا اطلاق آج (20 نومبر) سے 31 جنوری تک رہے گا۔

ترجمان محکمہ صحت پنجاب نے عوام سے اپیل کی ہے کہ حکومت پنجاب کا ساتھ دیں، کورونا وائرس کی پہلی لہر کی طرح دوسری لہر پر حکومت اور عوام مل پر قابو پائیں گے۔

دوسری جانب نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق گذشتہ 24گھنٹوں کےدوران  36 افراد  زندگی کی با زی ہا ر گئے ہیں جس کے بعد اموات کی تعداد 7 ہزار 561 ہوگئی ہے۔