عالم اسلام توہین رسالت کو عالمی جرم تسلیم کرائے ، حسین محنتی

349

کراچی (اسٹاف رپورٹر)جماعت اسلامی سندھ کے امیر وسابق ایم این اے محمد حسین محنتی نے فرانس میں توہین آمیز خاکوں کی اشاعت اور سرکاری عمارتوں پر نمائش کو مغرب کی فکری دہشت گردی قرار دیتے ہوئے اسے کائنات کا سب سے سنگین جرم قرار دیا ہے ،فرانسیسی صدر کی توہین برداشت نہیں کرسکتے تو پھر ڈیڑھ ارب مسلمان اپنے دلوں کی دھڑکن نبی مہربانؐ کی توہین کیسے برداشت کرسکتے ہیں، ہولوکاسٹ پر تحریر،تجزیے اور تحقیقات کرنے پر پابندی لیکن شعائر اسلام اور پیغمبر اسلام کی توہین کو اظہار کی آزادی قرار دینا مغرب کی منافقت،دورنگی اور اسلام دشمنی کا کھلا ثبوت ہے۔ انہوں نے ایک بیان میں کہا کہ اوآئی سی کا لولا لنگڑا احتجاج اب کسی کام کا نہیں اس نازک اور اہم معاملے پر تمام مسلمان ممالک متفقہ لائحہ عمل اختیار کرتے ہوئے توہین رسالت کے گھنائونے عمل کو عالمی جرم تسلیم کرائیں تاکہ آئندہ کسی شخص، گروہ یا ملک کو اس قسم کی ناپاک جسارت کرنے کی جرأت نہ ہوسکے۔ صدر میکرون کی انتہاپسندی خود مغرب اور فرانس کے لیے زہر قاتل ثابت ہوگی۔ پاکستان سمیت تمام اسلامی ممالک کو مسلمانوں کے جذبات کی ترجمانی کرتے ہوئے فرانسیسی مصنوعات کا بائیکاٹ ،سفرا کی ملک بدری اور اقوام متحدہ سمیت عالمی فورمز پر سخت احتجاج کے ذریعے مغرب کو یہ پیغام دینا چاہیے کہ اب یہ سلسلہ مزید برداشت نہیں کیا جاسکتا، مغرب میں اسلام کی مقبولیت اورتیزی سے پھیلنے کے نتیجے میں مغربی رہنمائوں کی بوکھلاہٹ کا نتیجہ ہے کہ وہ اسلام اور شعائر اسلام کے خلاف کھل کر سامنے آئے ہیں، کویت، اردن، فلسطین، قطرکی طرح پاکستان میں بھی فرانسیسی مصنوعات کے بائیکاٹ کا سرکاری اعلان کیا جائے۔