اسکردومیں مسافر کوچ پہاڑی تودے کی زد میں آگئی، 4فوجی جوانوں سمیت 16افراد جاں بحق

45

پشاور (مانیٹرنگ ڈیسک) خیبرپختونخوا کے ضلع جگلوٹ اسکردو روڈ پر لینڈ سلائیڈنگ کے نتیجے میں 4 فوجی جوانوں سمیت 16افراد جاں بحق ہوگئے۔ تفصیلات کے مطابق خیبرپختونخوا کے ضلع جگلوٹ اسکردو روڈ پر باغیچہ کے مقام پر راولپنڈی سے اسکردو جانے والی بس لینڈ سلائیڈنگ کی زد میں آگئی جس کے نتیجے میں 12 مسافر اور پاک فوج کے 4 جوان شہید ہوگئے۔شہدا میں سپاہی سوناخان، سپاہی آصف ، سپاہی ارشاد، سپاہی فاروق شامل ہیں، پاک فوج کی کوئیک رسپانس ٹیمز ایمبولینس، انجینئرز کے ہمراہ موقع پر موجود ہیں۔ پولیس حکام کا کہنا ہے کہ بس میں 18 مسافر سوار تھے، 10 افراد موقع پر ہی جاں بحق ہو گئے جبکہ مزید 6 افراد بعد میں دم توڑ گئے۔پولیس نے حادثے میں 16 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ ڈرائیور اور کنڈیکٹر سمیت 6 مسافروں کی شناخت کر لی گئی ہے۔ جاں بحق افراد کی لاشیں سی ایم ایچ اسکردو منتقل کر دی گئیں، وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان میر افضل نے افسوس ناک واقعے پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے متاثرہ خاندانوں سے اظہار ہمدردی کرتے ہوئے میتوں کو آبائی علاقوں تک پہنچانے کے لیے ضروری اقدامات کی ہدایت بھی جاری کی۔آپریشن میں ریسکیو 1122، مقامی پولیس، ایف ڈبلیو او کی ٹیموں نے حصہ لیا، ریسکیو ذرائع کے مطابق راولپنڈی سے اسکردو آتے ہوئے مسافر وین روندو تنگوس کے مقام پر پہاڑی تودہ گرنے کے بعد ملبے تلے دب گئی تھی۔ لاشیں اسکردو سی ایم ایچ منتقل کردی گئیں جہاں سے آبائی علاقوں کو روانہ کی جائیں گی۔