کراچی میں بجلی ، گیس بحران کے ذمے دار عمر ایوب ہیں،ناصر شاہ

117

کراچی(اسٹاف ر پورٹر)سندھ کے وزیر بلدیات و اطلاعات سید ناصر حسین شاہ کا کہنا ہے کہ کراچی میں بجلی اور گیس بحران کے ذمے دار وزیر توانائی عمر ایوب ہیں۔وفاقی حکومت مسلسل آئین کے آرٹیکل 158 کی پامالی کرتی آئی ہے۔ پاکستان کی مجموعی گیس کا 68 فیصد سندھ دیتا ہے، مگر آج سندھ میں گیس نایاب ہے۔ جمعہ کے روز اپنے دفتر سے جاری بیان میں صوبائی وزیر کا کہنا تھا کہ وفاق گیس کی ضرورت پوری نہیں کررہا جس کی وجہ کراچی سمیت صوبے میں بحران ہے۔وفاقی حکومت جان بوجھ کر سندھ کو اس کا جائز گیس کا حق نہیں دے رہی ۔ وفاق کو بتا دینا چاہتے ہیں کہ سندھ کے شہریوں کو مہنگی ایل این جی نہیں، سندھ کی گیس دو کیوں کہ آئین کے آرٹیکل 158 کے تحت صوبائی وسائل پر پہلا حق اس صوبے کا ہے جہاں پیداور ہو رہی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ بجلی گیس کی قیمتیں بڑھانا وفاقی حکومت کا پسندیدہ مشغلہ بن چکا ہے۔ علاوہ ازیں ناصرحسین شاہ نے ایم کیو ایم رہنمائوں کے بیانات پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ شہریوں کو زندہ جلانے والے کس منہ سے شہر کے حقوق کی بات کرتے ہیں۔ متحدہ والے کراچی کی فکر چھوڑیں، بتائیں رحمن بھولا کون ہے۔ مردم شماری پر سندھ یک زبان ہے، مگر ایم کیو ایم وفاقی حکومت کی باندی بنی ہوئی ہے،متحدہ سندھ دشمنی میں پی ٹی آئی کا ہراول دستہ ہے۔ انہوں نے کہاکہ ایم کیو ایم والے اب کرایہ پر لوگ ڈھونڈتے ہیں لیکن وہ بھی نہیں ملتے۔