وٹامن ڈی کی کمی، کب اور کسے ہوتی ہے؟

990

آپ مختلف وجوہات کی بناء پر وٹامن ڈی کی کمی کا شکار ہو سکتے ہیں جو کہ مندرجہ ذیل ہیں۔

1) آپ کو اپنی غذا میں وٹامن ڈی بقدر ضروت نہیں ملتا یعنی آپ کا جسم غذا کے ذریعے وٹامن ڈی حاصل نہیں نہیں کرپاتا۔

2) آپ کے جسم کی سورج کی روشنی میں نمائش نہیں ہوپاتی۔

3) آپ کا جگر یا گردے جسم میں وٹامن ڈی کو اپنی فعال شکل میں تبدیل نہیں کرسکتے۔

4) آپ ایسی دوائیں لیتے ہیں جو آپ کے جسم میں وٹامن ڈی کو تبدیل کرنے یا جذب کرنے کی صلاحیت میں مداخلت کرتی ہیں۔

کون سے افراد وٹامن ڈی کا شکار ہوسکتے ہیں؟

دودھ پینے والے نوزائیدہ بچے کیوں کہ انسانی دودھ وٹامن ڈی کا ناقص ذریعہ ہے اگر آپ دودھ پلا رہے ہیں تو اپنے بچے کو ہر روز IU 400 وٹامن ڈی کی اضافی خوراک دیں۔

زیادہ تر بالغ افراد کیوں کہ اکثر جوان سورج کی روشنی سے اپنی نمائش مین لاپرواہی برتتے ہیں۔

گردے کے مریض افراد جن کے گردے وٹامن ڈی کو فعال جُز میں تبدیل کرنے میں  ناکام ہوجاتے ہیں۔

سیاہ جلد والے افراد جن میں سورج سے وٹامن ڈی تیار کرنے کی صلاحیت کم ہوتی ہے۔

۔ کرون بیماری یا سیلیک بیماری جیسے عارضے میں مبتلا افراد جو چربی کو ٹھیک طرح سے نہیں بنا نہیں سکتے کیونکہ وٹامن ڈی کو جذب کرنے کے لئے چربی کی ضرورت ہوتی ہے۔

جن لوگوں کو گیسٹرک بائی پاس سرجری ہوچکی ہے۔

گردے یا جگر کی دائمی بیماری والے افراد۔ سارکوائڈوسس ، تپ دق ، ہسٹوپلاسموسس یا دیگر گرینولوومیٹس بیماری والے افراد اور کچھ لیمفوماس والے افراد (کینسر کی ایک قسم)۔

وہ لوگ جو ایسی دوائیں لیتے ہیں جو وٹامن ڈی میٹابولزم کو متاثر کرتی ہیں ، جیسے کہ کولیسٹرولیم (کولیسٹرول کی دوائی) ، قبض سے بچنے والی دوائیں، اینٹی فنگل دوائیں اور ایچ آئی وی / ایڈز کی دوائیں۔