نجی اسکول کی طالبہ جاں بحق، وزیر کا نوٹس، تحقیقاتی کمیٹی تشکیل

176

وزیر تعلیم و محنت سندھ سعید غنی نے نجی اسکول کی سیڑھیوں سے گر کر جاں بحق ہونے والی طالبہ کی خبر پر فوری نوٹس لے لیا۔

صوبائی وزیر نے ڈی جی پرائیویٹ اسکولز منصوب صدیقی سے فوری طور پر واقعہ کی رپورٹ طلب کرلی ہے۔

صوبائی وزیر کا کہنا ہے کہ اس بات کی مکمل تحقیقات کی جائے کہ سانحہ کیسے ہوا اور سانحہ کے بعد اسکول کی انتظامیہ نے کیوں فوری طور پر بچی کو اسپتال نہیں پہنچایا۔

ڈی جی پرائیویٹ اسکولز منصوب صدیقی کا کہنا ہے کہ  صوبائی وزیر کی ہدایات پر فوری طور پر ڈپٹی ڈائریکٹرز پر مشتمل 2 رکنی تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دے دی ہے،متعلقہ ڈپٹی ڈائریکٹرز اسکول پہنچ گئے ہیں اور سانحہ کے حوالے سے تمام حقائق کی تحقیقات کررہے ہیں۔

واضح رہے کہ کراچی کے علاقے عائشہ منزل پر واقع  نجی اسکول میں  طالبہ سیڑھیوں سے گر کر جاں بحق ہو گئی تھی۔

نجی اسکول کے مالک کا کہنا ہے کہ طالبہ اریبا سیڑھیوں سے اوپر جارہی تھی کہ اچانک گر گئی، طالبہ کو فوراً نجی اسپتال منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹر نے بتایا کہ وہ انتقال کر گئی ہے۔

اہلخانہ نے الزام عائد کیا ہے کہ اسکول انتظامیہ طالبہ کو فوری طور پر اسپتال نہیں لے کر گئی اور نہ  ہی والدین کو اطلاع دی۔