‘کئی بار کہہ چکے اسلام آباد میں لاقانونیت ہے’

178

چیف جسٹس اسلام آبا ہائیکورٹ جسٹس اطہر من اللہ نے کہا ہے کہ کئی بار کہہ چکے ہیں کہ اس شہرمیں لاقانونیت ہے ریاست کی رٹ بھی توکہیں ہونی چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق اس کیس کے دوران ایڈیشنل سیشن جج جہانگیراعوان فائرنگ واقعےسےمتعلق چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ نے ریمارکس دیے کہ آپ نے دیکھا ہے کہ کل ریڈزون میں کیا ہوا ہے؟ ریڈزون میں ایک بندہ فائر کررہا ہے،چاہے اس کی کوئی بھی وجہ ہو۔

چیف جسٹس نے کہا کہ کئی بار کہہ چکے ہیں کہ اس شہرمیں لاقانونیت ہے،ریاست کی رٹ بھی توکہیں ہونی چاہیے،ریاست بھی توکسی چیزکی ذمےداری لے۔

جسٹس اطہر من اللہ کا کہنا تھا کہ ریڈزون میں لڑائی کا دوسرا فریق بھی بااثر ہے، یہ تمام بڑے آدمی سمجھوتے کیوں کرجاتے ہیں؟ میں نے کبھی نہیں سنا کہ کسی مہذب معاشرے میں ایسے سمجھوتےہوتے ہیں۔