بھارت میں بابری مسجد کی جگہ رام مندر کی تعمیر عالمی اصولوں کی خلاف ورزی ہے، پاکستان

70

اقوام متحدہ (اے پی پی) پاکستان نے بھارت کے شہر ایودھیا میں1992ء میں شہید کی جانے والی تاریخی بابری مسجد کی جگہ رام مندر کی جاری تعمیر کو بین الاقوامی اصولوں کی خلاف ورزی قرار دیا ہے۔ اقوام متحدہ میں پاکستان کے مندوب منیر اکرم نے ’’فورم آن کلچر آف پیس‘‘ کے ورچول اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان مذہبی مقامات کے تحفظ کے لیے اقوام متحدہ کے منصوبے کی حمایت کرتا ہے‘ بھارت میں حکمران بھارتیہ جنتا پارٹی اور آر ایس ایس کے انتہا پسند سیکڑوں مساجد اور تاریخی اسلامی مقدس مقامات کو تباہ کرنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسلامی ثقافتی پہچان رکھنے والے مراکز اور مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کی آبادی کے تناسب کو تبدیل کرکے چوتھے جنیوا کنونشن سمیت بین الاقوامی قوانین کی سنگین خلاف ورزی ہے‘ ورلڈ آرڈ اور عالمی امن کو اب شدید خطرات لاحق ہیں۔ قائد اعظم محمد علی جناح کے وژن کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اسی وژن سے رہنمائی لیتے ہوئے پاکستان نے ہمیشہ انصاف اور امن کے اصولوں کا دفاع کیا ہے‘ برابری، انصاف، برداشت اور امن پر مبنی ریاست مدینہ کی گورننس تاریخ میں ایک مثال کی حیثیت رکھتی ہے‘ اس نے عرب، اسپین اور جنوبی ایشیا میں اسلام کے سنہری وقت کی بنیاد رکھی جہاں برداشت اور تعاون کی اقدار پر امن قائم کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان نے سکھ یاتریوں کے لیے کرتار پور میں دنیا کا سب سے بڑا گردوارہ تعمیر کیا‘ بھارت اور پاکستان کے درمیان اس راہداری کو گزشتہ سال وزیر اعظم عمران خان نے کھولا ۔