لاہور موٹروے واقعے کی تحقیقات کیلیے کمیٹی تشکیل

234

لاہور میں موٹروے پر خاتون سے اجتماعی زیادتی کے واقعے کو  3 روز گزر جانے کے بعد بھی کوئی ملزم گرفتار ہوا نہیں ہو سکا۔

واقعے کے بعد سے پولیس پٹرولنگ ممکن نہ ہوئی اور صرف ٹول پلازہ پر ایلیٹ اہلکار تعینات کر کے سب اچھا کی رپورٹ دی  ہے۔

پنجاب حکومت نے لاہور میں موٹروے پر خاتون سے زیادتی کی تحقیقات کیلئے اعلیٰ سطح کی کمیٹی تشکیل دیدی ہے وزیر قانون پنجاب راجا بشارت کی سربراہی میں کمیٹی واقعے کی تحقیقات کرے گی۔

 میڈیکل رپورٹ میں خاتون سے زیادتی کی تصدیق ہوئی ہے، آئی جی پنجاب کا کہنا ہے کہ ملزمان کو قانون کی گرفت میں لانے کے لیے کوئی کسرنہ چھوڑی جائےگی۔

ایس ایس پی انویسٹی گیشن پی ملک ذیشان اصغر کا کہنا ہے کہ کریمنل ریکارڈ کے حامل 70 افراد کو شارٹ لسٹ کیاہے تمام افراد جائے وقوعہ کے اطراف کے رہائشی ہیں، ملزمان کی واقعہ کے وقت لوکیشنز چیک کروائی جارہی ہیں، ملزمان واردات کیلئے پیدل آئے اور واپس بھی پیدل گئے۔