وزیر اعظم پاکستان، یوم دفاع کے موقع پر قوم کو پیغام

127

اسلام آباد: یوم دفاع پاکستان آج منایا جارہا کے موقع پر اپنے پیغام میں، وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ 6ستمبر کی شاندار تاریخ جسے ہمت کی علامت کے طور پر یاد کیا جاتا ہے، جو مضبوط عزم اور ملک کی بہادر مسلح افواج کے ذریعہ قربانی کا بے مثال جذبہ تھا۔

عمران خان نے کہا کہ بہادر پاکستانی قوم ساتھ مل کر افسران، فوجی، نیوی اور ایئر مین آج سے 55سال پہلے، اس دن پر دنیا کے سامنے ثابت ہوئے کہ وہ مادر وطن کے ہر انچ کا دفاع کرنے کے لئے ہر وقت تیار ہیں، چاہے ان کی قیمت کتنی ہی کیوں نہ ہو۔

وزیر اعظم نے کہا کہ قوم اور یونیفارم میں موجود لوگوں نے ثابت کردیا ہے کے قد و قامت سے کچھ فرق نہیں ہوتا، بلکہ بہادری کا جذبہ ہمت اور عقیدت ہے جو سب سے زیادہ اہمیت رکھتی ہے۔

دوسری جانب وزیراعظم نے کہا کہ انڈیا نے مقبوضہ کشمیر میں 370 اور 35  اے کی شقوں کو ختم کر کے اقوام متحدہ کے منشور کی ‏خلاف ورزی کی ہے، ‏انڈیا نے بے گناہ معصوم کشمیریوں پر دہشت اور خوف مسلط کررکھی ہے۔

وزیراعظم نے  کہا کہ انڈیا لائن آف کنٹرول پر بھی جارحانہ طرز عمل کا مظاہرہ کر رہا ہے، اشتعال انگیزیوں کا مقصد دنیا کی توجہ مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی مظالم سے ہٹانا ہے،  جنکہ پاکستان امن کا علمبردار ہے  اس بات کو ہماری کمزوری نہ سمجھا جائے بلکہ ہماری امن کی خواہش جنوبی ایشیاکے عوام کی اقتصادی بہبود اورخوشحالی کیلئے روشنی کی کرن ‏ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ واضح رہے  پاکستانی قوم اور مسلح افواج نے بارہا ثابت کیا کہ وہ ملک کے دفاع کی بھرپور صلاحیت ‏رکھتی ہیں اور کسی بھی قسم کی صورتحال واقعات  سے نبرد آزما ہونے کیلئے پوری طرح لیس ہیں۔

عمران خان  نے اپنے پیغام میں  شہدا اور غازیوں کو خراج عقیدت پیش کیا اور پاکستان کا دفاع کرنے ، اس کی سلامتی اور خودمختاری کو ہر قیمت پر اسی جذبے،  ہمت اور ناقابل فراموش جذبے سے ہر دم دفاع کرنے کا عہد کیا جو 1965 کی جنگ کے شہداء اور غازیوں نے ظاہر  کیا تھا۔