مقبوضہ بیت المقدس میں فلسطینی خاندان کو اپنا مکان مسمار کرنے کا حکم

146
امغربی کنارہ: طولکرم قصبے میں قابض صہیونی فوج امریکی پولیس کے نقش قدم پر چلتے ہوئے فلسطینی کو گرفتار کررہی ہے

مقبوضہ بیت المقدس(انٹرنیشنل ڈیسک) اسرائیلی حکام نے مقبوضہ بیت المقدس کے شہر بیت حنینا میں 2 بھائیوں کو اپنا گھر مسمار کرنے پر مجبور کردیا۔ متاثرین کا کہنا تھا کہ اسرائیلی بلدیہ کی جانب سے انہیں بلڈوزر لانے اور اپنا گھر منہدم کرنے پر مجبور کیا گیا، تاکہ وہ ہزاروں شیکل جرمانے سے بچ سکیں۔ بیت المقدس ہی کے علاقے جبل مکبر میں بھی فلسطینی شہری خالد محمود نے اسرائیلی جرمانوں کے خوف سے اپنا 50 مربع میٹر پر تعمیر گھر اپنے ہاتھوں سے گرادیا۔