دو سالہ بیٹے کے سامنے ماں نے باپ کی لاش کے ٹکڑے کردیے

349

یوکرین سے تعلق رکھنے والے گلوکار کی لاش کو اُن کی رہائش گاہ سے برآمد کرنے کے بعد پولیس نے مرحوم کی اہلیہ کو گرفتار کرلیا۔

غیر ملکی نیوز ایجنسی ڈیلی میل کے مطابق 30 سالہ یوکرینی گلوکار اینڈی کارٹ رائٹ (اصل نام الیگزینڈر یوشکو) کی لاش اُن کے فلیٹ سے برآمد ہونے کے بعد ان کی 36 سالہ اہلیہ میرینا کوکھل کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

اہلیہ کوعدالت میں پیش کیا گیا جہاں انہوں نے اپنے جرم کا اعتراف کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اینڈی کارٹ نے سینٹ پیٹرزبرگ میں حد سے زیادہ منشیات کا استعمال کیا تھا۔ جب وہ گھر آئے تو منشیات کی زیادہ مقدار کی وجہ سے اُن کی طبیعت بگڑ گئی اور اور کچھ ہی دیر میں ان کی موت واقع ہوگئی۔

میرینا کوکھل کا کہنا تھا کہ وہ نہیں چاہتی تھیں کہ ان کے مداحوں کو پتہ چلے کہ ان کا انتقال اس حالت میں ہوا ہے جس کے لئیے انہوں نے لاش کے ٹکڑے کیے اور انہیں سیاہ پلاسٹک بیگز میں ڈال کر فریج میں رکھ دیا۔۔

مقامی پولیس کے مطابق لاش کے ٹکڑے کرنے کیلئے میرینا کوکھل نے چاقو، ہتھوڑا، آری اور تختے کا استعمال کیا تھا۔

رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ جوڑے کا دو سالہ بچہ بھی ہے جو اس وقت فلیٹ میں موجود تھا جب وہ اپنے شوہر کی لاش کے ٹکڑے کر رہی تھیں۔