بیروت دھماکے کے نتیجے میں 78 افراد جاں بحق، 4 ہزار سے زائد زخمی

542

بیروت: لبنان کے دارالحکومت بیروت میں گزشتہ روز دھماکوں کے نتیجے میں 78 افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ 4 ہزار سے افراد زخمی ہیں۔

غیرملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق بیروت میں گزشتہ روزوئیر ہاؤس میں 2 دھماکے ہوئے جس کے نتیجے میں متعدد گھروں، دفاتر اور دکانوں کو شدید نقصان پہنچا ہے جبکہ درجنوں گاڑیاں بھی تباہ ہوگئی ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بیروت میں ہونے والے دھماکے اتنے شدید تھے کہ 8 کلومیٹر دور تک آواز سنی گئی جبکہ دھماکوں کے نتیجے میں لبنان کی بندرگاہ کا علاقہ بری طرح متاثر ہوا ہے۔دھماکوں کے باعث عمارتیں بری طرح لرز اٹھیں ، ہر طرف چیخ و پکار کی آوازیں سنائی دے رہی تھیں اور عینی شاہدین نے سیاہ دھویں کو اوپر دور تک اٹھتے ہوئے دیکھا گیا۔

رائٹرز کا کہنا ہے کہ دھماکوں کے نتیجے میں لوگ ملبے تلے دبے ہوئے ہیں، متعدد زخمیوں کے اجسام خون آلود بھی دکھائی دیے ہیں۔

دوسری جانب لبنانی وزیراعظم کا کہنا ہے کہ تباہی کے ذمہ داروں کو قیمت چکانا ہوگی، حملے کے ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

لبنانی وزیر صحت حماد حسن کا کہنا ہے کہ دھماکوں سے بڑی تعداد میں شہری زخمی ہوئے ہیں اورغیر معمولی نقصان ہوا ہے ۔دھماکوں کے بعد سے کئی علاقوں میں بجلی کی فراہمی معطل ہے۔

واضح رہے کہ تاحال دھماکوں کی وجہ سامنے نہیں آسکی ہے۔