پنشن کلیم میں کوتاہی نہ کی جائے‘ نظام الدین شاہ EOBI

91

نیشنل لیبر فیڈریشن سندھ کے صد ر سید نظام الدین شاہ، جنرل سیکرٹری شکیل احمد شیخ، حیدرآباد زون کے جنرل سیکرٹری اعجاز حسین، اختر غلام علی، انفارمیشن سیکرٹری محمد احسن شیخ اور دیگر نے ایمپلائز اولڈ ایج انسٹی ٹیوشن حیدرآباد ریجن میں ریٹائرڈ ملازمین، بیوائوں اور یتیم بچوں کے پنشن کلیم کی طویل عرصہ تک زیر التوا رکھنے اور بوڑھے، بیوائوں اور بچوں کو دفتر کے بار بار چکر کاٹنے پر مجبور کرنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے اس ادارے کی بنیادی مقاصد کی سنگین خلاف ورزی قرار دیا ہے۔ ان رہنمائوں نے کہا کہ قوائد کے مطابق پنشن کلیم داخل کیے جانے کے بعد 45دن کے اندر اندر ریجن کو پنشن کی منظوری یا مسترد کیے جانے کی صورت میں کلیم مسترد کرنے کی وجوہات سے تحریری طور پر درخواست گزار کو آگاہ کرنا ضروری ہے لیکن پچھلے طویل عرصہ سے پنشن کلیم مسلسل زیر التوا ہیں اور بڑی تعداد میں ایسے کیسز ہیں جن کا کلیم داخل کیے ہوئے سال سے 2سال کا عرصہ بھی گزر چکا ہے لیکن ریجن ان پنشن کلیم کا کوئی فیصلہ کرنے سے گریزاں ہے جو ان غریب محنت کشوں کے حق پر عملاً ڈاکے کے مترادف ہے۔ ان رہنمائوں نے چیئرمین EOBI سے مطالبہ کیا ہے کہ حیدرآباد ریجن کی اس خود سری اور قانون کے خلاف کارروائی کا سختی سے نوٹس لیں اور پنشن کلیم کو مقرر وقت میں طے کرنے کا پابند کریں۔ NLF ہر سطح پر مزدورں کے حقوق کی جدوجہد کر رہی ہے اور کرتی رہے گی۔