بھارت: کوروناوائرس کا خوف، اساتذہ کا امتحانی کاپیاں چیک کرنے سے انکار

359

مدھیہ پردیش (بھوپال): انٹر بورڈ کے امتحانات کی کاپیوں کو مادھیمک شکشا منڈل کے اساتذہ نے کوروناوائرس کے خوف سے چیک کرنے سے انکار کردیا۔

مدھیہ پردیش میں بورڈ کے امتحانات کا آغاز دو مارچ سے ہوا تھا۔ کچھ پیپروں کا امتحان مارچ کے مہینے میں کورونا لاک ڈاؤن سے پہلے ہو گیا تھا مگر لاک ڈاؤن کا نفاذ ہونے کے بعد بورڈ کے امتحانات کو بیچ میں بند کردیا گیا تھا۔ ان لاک ون کا نفاذ ہونے کے بعد نو جون سے سولہ جون کے بیچ باقی پیپروں کا پھر سے انعقاد کیا گیا۔ اب جب پیپروں کو جانچنے کی باری تو آئی تو اساتذہ نے مرکز پر جاکر پیپروں کو چیک کرنے سے انکار کردیا کردیا اور مدھیہ پردیش کے وزیر داخلہ و وزیر صحت ڈاکٹرنروتم مشرا سے ملاقات کی اور انہیں اپنا میمورنڈم پیش کیا۔

 صوبائی صدرمکیش شرما کا کہنا ہے کہ لاک داؤن سے پہلے ہوئے امتحان میں اساتذہ کو گھر لے جا کر کاپیاں چیک کرنے کی اجازت دی گئی تھی تاہم ابھی جو کاپیاں چیک کرنے کا کا م شروع کیا جا رہا ہے اس میں سبھی اساتذہ کو سینٹر پر آکر ہی کاپی چیک کرنے کے کے لئے کہا گیا تھا۔

اساتذہ کا کہنا تھا کہ بڑی تعداد میں اگر اساتذہ کو ایک جگہ جمع کرکے کام کیا جائے گا تو کورونا وبا اور بڑھ جائے گی۔ ہمارا مطالبہ ہے کہ  امتحان ختم ہونے کے پندرہ دن بعد اگر کاپیوں کو جانچنے کاکام شروع کیا جاتا ہے تو امتحان کے وقت اگر کسی کاپی میں کورونا کے وائرس آئے ہوں گے تو وہ مر جائیں گے اور ایسے میں ہم لوگ سینٹر پر آکر کاپیوں کو جانچنے کا کام کر سکیں گے۔