سراج الحق کا شاہ محمود قریشی کو فون۔بیرون ملک پاکستانیوں کے مسائل سے آگاہ کیا

33

لاہور(نمائندہ جسارت)امےر جماعت اسلامی پاکستان سےنےٹر سراج الحق نے وزےر خارجہ شاہ محمود قرےشی کو ٹےلی فون کرکے اوورسےز پاکستانےوں کے مسائل سے آگاہ کےااور کہا کہ کورونا وباسے لاک ڈاﺅن اور کرفےو سے سعودی عرب اور عرب امارات مےں لاکھوں پاکستانی اپنی رہائش گاہوں مےں قید ہوکر رہ گئے ہےں۔کاروبار بند اور روز گار نہ ہونے کی وجہ سے لوگ فاقوں کا شکار ہےں۔ سعودی عرب اور عرب امارات مےں رہائش گاہوں مےں سےکڑوں افراد کی موجودگی وبا کے پھےلاﺅ کا باعث بن رہی ہے۔بےمار افراد کے لےے اےمبولےنسز کی سہولت تک نہےں ہے۔اسپتالوں کے ڈےڈ ہاوسسز مےں مےتوں کے رکھنے کی جگہ نہےں ہے۔اب تک اےک لاکھ 30 ہزار اوورسےز پاکستانی ٹکٹس کے لےے اپلائی کر چکے ہےں اور اپنے وطن آنے کے انتظار میں بیٹھے ہیں ۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ اوورسیز پاکستانیوں کو واپسی پر سفر، ٹےسٹ کی سہولت اور گھروں مےں قرنطےنہ کی اجازت دی جائے۔سعودی عرب اور دےگر بڑے ممالک مےں سفارت خانوں کی طرف سے ہےلپ لائن کا اعلان کےا جائے۔ متاثرین کے امدادی پیکج 12 ارب روپے مےں اےک قابل ذکر رقم اوور سےز پاکستانےوں کی امداد اور تعاون کے لیے رکھی جائے۔ اوورسیز پاکستانی سالانہ اربوں ڈالر کا قیمتی زرمبادلہ پاکستان بھجواتے ہیں اور دنیا بھر کے ممالک میں پاکستان کے سفیر ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہیلتھ سینٹرز میں 24گھنٹے ایمبو لینسز کی سہولت کو یقینی بنایا جائے ۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قرےشی نے سینیٹر سراج الحق کا شکرےہ ادا کےااور انہیں یقین دلایا کہ وہ سفارتخانوں سے رابطہ کر کے انہےں مزےد فعال کریں گے۔اوورسےز پاکستانےوں کی واپسی پر ان کو عزت کے ساتھ مکمل علاج کی سہولت مہےا کی جائےگی اور اس سلسلے میں صوبائی حکومتوں کو بھی اپنی ذمے دارےاں ادا کرنے کی طرف توجہ دلائی جائے گی۔