ـ432 ارب روپے کے قرضوں کی وصولی مؤخر کی گئی ہے، اسٹیٹ بینک

51

کراچی (اسٹاف رپورٹر)کاروباروں کو تحفظ فراہم کرنے کیلئے ری فنانس سکیم کے تحت اب تک 432 ارب روپے کے قرضوں کی وصولی مؤخر کی گئی ہے،کاروباروں کو تحفظ فراہم کرنے کیلئے ری فنانس سکیم کے تحت اب تک 432 ارب .. کووڈ۔19 کے اثرات سے کاروباروں کو تحفظ فراہم کرنے کیلئے اسٹیٹ بینک آف پاکستان کی ری فنانس سکیم کے تحت اب تک 432 ارب روپے کے قرضوں کی وصولی مؤخر کی گئی ہے۔ سٹیٹ بینک آف پاکستان نے گذشتہ ماہ میں پاکستان بینکس ایسوسی ایشن کے اشتراک سے قرضہ کی اصل زر کی وصولی کو مؤخر کرنے کی سکیم شروع کی تھی۔ری فنانس کی سہولت سے استفادہ کیلئے قرض داروں کو 30 جون سے قبل متعلقہ بینک کو تحریری درخواست جمع کرانا ہو گی اور متفقہ شرائط و ضوابط کے تحت قرض حاصل کرنے والے سود کی ادائیگی کریں گے۔ سٹیٹ بینک آف پاکستان کی جانب سے جاری تفصیل کے مطابق ری فنانس کی سہولت سے استفادہ کرنے والوں کی کریڈٹ ہسٹری متاثر نہیں ہو گی اور نہ ہی ان کی تفصیلات کریڈٹ بیورو کے ڈیٹا میں دی جائیں گی۔ ایس بی پی نے کہا ہے کہ آئندہ سال تک واجب الوصول مجموعی اصل زر 4.70 کھرب روپے ہے۔