کنزیومر کمپنیوں کا منافع 57.8 ارب روپے تک کم ہو گیا

102

کراچی ( اسٹاف رپورٹر )سال 2019 کے دوران پاکستان ا سٹاک ایکسچینج میں لسٹڈ کنزیومر کمپنیوں کے منافع جات میں 26 فیصد کمی ہوئی ہے۔ عالمی اقتصادی سست روی کے باعث پی ایس ایکس میں لسٹڈ 20بڑی کمپنیوں کے منافع میں کمی ہوئی ہے۔ ٹاپ لائن سکیورٹیز کی رپورٹ کے مطابق سال 2019 کے دوران کنزیومر کمپنیوں کا منافع 57.8 ارب روپے تک کم ہو گیا۔پی ایس ایکس میں لسٹڈ 20کنزیومر کمپنیوں کا ملکی مارکیٹ میں حصہ ایک تہائی ہے۔ رپورٹ کے مطابق گزشتہ سال کے دوران بڑی کنزیومر کمپنیوں کی فروخت میں3فیصد کمی سے فروخت کا حجم 773.4 ارب روپے ہو گیا۔ ٹاپ لائن سکیورٹیز کے تجزیہ کار سنی کمار نے کہا ہے کہ اقتصادی سست روی کے باعث صارفین کی قوت خرید کم ہوئی ہے۔ پی ایس ایکس سے رجسٹرد صارف کمپنیوں میں انڈس موٹرز، تھل لمیٹڈ، ہنڈا کار، نیسلے ، پیکجز، کولگیٹ، گلیکسو اور ایبٹ سمیت دیگر بڑی صارف کمپنیاں بھی شامل ہیں۔