لیاری ایکسپریس وے پر لگائے گئے پودے کہاں گئے؟ بلاول برہم

100

کراچی(اسٹاف رپورٹر)بلاول زرداری نے لیاری ایکسپریس وے پر اربن فاریسٹ منصوبے کا جائزہ لیا۔ انہوں نے وزیرجنگلات کو کام تیز کرنے کی ہدایت اور پودے غائب ہونے کی اطلاعات پر برہمی کا اظہار کیا۔چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول زرداری نے صوبائی وزیر جنگلات ناصر شاہ سے دریافت کیا کہ شہر میں نہ پارکس کی صورتحال بہتر ہے، اور نہ ہی اربن فاریسٹ پر کام میں پیش رفت ہوئی ہے۔ سوشل میڈیا دیکھیں، لوگ ہم پر تنقید کررہے ہیں۔ لیاری ایکسپریس وے پر لگائے گئے پودے اور درخت کہاں گئے؟انہوں نے کہا کہ شاہ صاحب کام میں تیزی لائیں۔ شہر کے پارکس اور بے نظیر پارک کی کیا حالت ہے۔ نہر خیام پر کیسے شجرکاری ہوگی اور پارک بنے گا،کام کر کے دکھایا جائے۔بلاول زرداری نے سندھ حکومت کو شجرکاری منصوبے کے پہلے فیز کی تکمیل کے لیے 3ماہ کا وقت دے دیا۔انہوںنے کہا کہ وہ اربن فاریسٹ منصوبے کا جائزہ لینے کیلیے دورے کرتے رہیں گے۔ اپنی نئی نسل کو سرسبز ماحول فراہم کرنا ہم سب کی ذمے داری ہے۔چیئرمین پی پی پی نے لیاری کے بچوں کے لیے والی بال کورٹ، فٹ بال اور باکسنگ رنگ پر مشتمل پلے ایریا بنانے کی ہدایت کی۔واضح رہے کہ چیئرمین بلاول زرداری نے 4فروری کو لیاری ایکسپریس وے کے قریب اربن فاریسٹ منصوبے کا افتتاح کیا تھا۔