امریکا اور اسرائیل مل کر فلسطین کو نیست و نابود کرنا چاہتے ہیں: ترک صدر

451

ترک صدر رجب طیب اردوان کا کہنا ہے کہ امریکا اور اسرائیل مل کر فلسطین کو نیست ونابود کرنا چاہتے ہیں، صدر ٹرمپ امن کے نام پر مشرق وسطیٰ کے امن کو برباد کرنا چاہتے ہیں، فلسطینی ریاست کے وجود کو ختم کرنے کی سازش کامیاب ہونے نہیں دیں گے، ہماری ذمہ داری ہے کہ ہم فلسطینی قوم کے حقوق کا عالمی سطح پر مقدمہ لڑیں۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ان خیالات کا اظہار ترک صدر رجب طیب اردوان نے ملائیشیا میں منعقدہ القدس پارلیمنٹیرینز ایسوسی ایشن سے اپنے وڈیو خطاب سے کیا۔

ترک صدر نے کہا کہ امریکی منصوبے سے خطے میں امن کا خواب پورا نہیں ہوسکتا، اس خطرناک سازشی منصوبے کو آگے  بڑھانے کی اجازت نہیں دی جائے گی، امریکا القدس کو اسرائیل کے حوالے کرکے خطرناک عالمی ایجنڈے پر چل رہے ہیں۔

اردوان نے کہا  کہ ہم امریکا کے اس خطرناک منصوبے کو کسی صورت میں قبول نہیں کرسکتے، ہم مزید فلسطینی اراضی صہیونی ریاست میں شام کرنے کی ہرگز اجازت نہیں دیں گے، امریکا اور اسرائیل مل کر فلسطین کو نیست ونابود کرنا چاہتے ہیں، القدس کو مکمل بلیک میلنگ کا سامنا ہے، ہم اسرائیلی ریاست کے دفاع کے لیے فلسطینی ریاست کے وجود کو ختم کرنے اور دو ریاستی حل کو ختم کرنے کی کسی سازش کو آگے نہیں بڑھنے دیں گے۔

ترک صدر نے مزید کہا کہ صہیونی ریاست کی موجودہ سرحدیں غیرآئینی ہیں۔ ایسے میں ترکی کے لیے خاموش تماشائی بنے رہنے کا  کوئی جواز نہیں، ایک مسلمان ملک کی حیثیت سے ہماری پوری ذمہ داری ہے کہ ہم فلسطینی قوم کے حقوق کا عالمی سطح پر مقدمہ لڑیں۔