وزیراعظم کا بھانجا تاحال قانون کی گرفت میں نہ آسکا

166

لاہور: وکلا کی جانب سے پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی (پی آئی سی) میں ہنگامہ آرائی کے افسوسناک واقعے کو چار روز گزر جانے کے بعد بھی وزیراعظم عمران خان کے بھانجے ایڈووکیٹ حسان نیازی کو گرفتار نہ کیا جاسکا۔۔

تفصیلات کے مطابق حسان نیازی کو واقعے کے چوتھے روز ایف آئی آر میں بھی نامزد کر دیا گیا تھا جبکہ حسان نیازی پر توڑ پھوڑ اور پولیس وین نذر آتش کرنے میں پیش پیش ہونے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

 رائے ونڈ پولیس نے حسان نیازی کی گرفتاری کیلئے نجی ہاؤسنگ سوسائٹی میں ایک اور چھاپہ مارا تاہم ملزم پولیس کی گرفت میں نہ آسکا۔

وزیر اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان کا کہنا تھا کہ حسان نیازی وزیر اعظم کے بھانجے بعد میں ہیں، پہلے حفیظ اللہ نیازی کے بیٹے ہیں۔

خیال رہے کہ عدالت نے ریکارڈ پیش نہ کرنے پر متعلقہ تفتیشی افسر، ڈی ایس پی اور ایس ایچ او شادمان کو شوکاز نوٹس جاری کر دیا ہے۔

واضح رہے کہ انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے 11 وکلاء کی درخواست ضمانت پر سماعت 16 دسمبر تک ملتوی کردی۔