نواز شریف کے علاج کیلیے ضمانٹی بانڈز کی شرط بدنیتی ہے، اسفند یار ولی

27

پشاور(آن لائن)عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیارولی خان نے کہا ہے کہ عدالتی اجازت کے بعد سابق وزیر اعظم نوازشریف کا نام ای سی ایل سے نہ نکالنا اور ضمانتی بانڈز کی شرائط کے بہانے علاج سے روکنا سیاسی انتقام ہے، شرائط اس شخص کے لیے لگائی جارہی ہیں جو اپنی بیوی کو بستر مرگ پر چھوڑ کر بیٹی سمیت جیل جانے کے لیے ملک واپس آیا تھا۔انہوں نے کہا کہ سابق صدر آصف علی زرداری کا ذاتی معالج کی فراہمی جائز مطالبہ ہے ، سندھ دھرتی کے لیڈر کو پنجاب کی جیلوں میں رکھنا زیادتی ہے، اس کے لیے ان کا نام ای سی ایل سے نکالنے کی بھی ضرورت نہیں ، حکومت کا سیاسی مخالفین کے خلاف اس حد تک جانا انسانیت اور سیاسی روایات کی توہین ہے، کپتان کے آنے کے بعد سیاست سے شائستگی کے ساتھ ساتھ انسانیت بھی ختم ہوگئی ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ نوازشریف کو بغیر کسی شرط کے علاج کے لیے باہر بھجوایا جائے اور سابق صدر کو ذاتی معالج کی فراہمی کے ساتھ سندھ منتقلی یقینی بنائی جائے۔