کے یو جے دستور کے زیر اہتمام ٹیکس ریٹرن فائل کرنے سے متعلق ورکشاپ کا انعقاد

312

کراچی(اسٹا ف رپورٹر)کراچی یونین آف جرنلسٹس دستور کے زیر اہتمام فیڈرل بورڈ آف ریونیو کے تعاون سے کراچی پریس کلب میں ٹیکس ریٹرن جمع کروانے سے متعلق آگاہی ورک شاپ کا انعقاد کیا گیا۔ورکشاپ میں چیف کمشنر آرٹی ٹو ایف بی آر بدرالدین قریشی، ڈپٹی کمشنر حیات عمر ملک اور اداروں میں فری انکم ٹیکس ریٹرن سروس فراہم کرنے والی غیر سرکاری تنظیم کارساز کے سی ای او محمد جعفر نے خصوصی طور پر شرکت کی۔

چیف کمشنر فیڈرل بورڈ آف ریو نیو(ایف بی آر) بدر الدین صاحب کا کہنا تھا کہ یہ تاثر غلط ہے کہ انکم ٹیکس ریٹرن فائل کرنا پیچیدہ اور مشکل عمل ہے۔کم آمدنی والے تنخواہ دار طبقے کے لئے ایف بی آر نے “آسان ٹیکس ایپ ” متعارف کرایا ہے جس کے آسان اور سادہ طریقہ کار کے زریعہ کوئی بھی شخص کسی کی مدد لئے بغیر باآسانی اپنا ٹیکس ریٹرن خود ہی فائل کر سکتا ہے۔

ڈپٹی کمشنر حیات عمر ملک نے صحافیوں کو ٹیکس ریٹرن جمع کرنے کا طریقہ کار سمجھاتے ہوئے کہا کہ پہلے مرحلے میں رجسٹریشن کرانی پڑتی ہے جو نہایت ہی آسان ہے، بنیادی معلومات پر مشتمل فارم پر کرنے پر ایک کوڈ ای میل اور دوسرا ایس ایم ایس کے زریعے موصول ہو تا ہے جسے فارم پر درج کرنے سے رجسٹریشن کا عمل مکمل ہو جاتا ہے۔
دوسرے مرحلے میں ٹیکس ریٹرن فائل کیا جاتا ہے، رواں سال سے تنخواہ دار طبقے کو ویلتھ ٹیکس کی تفصیلات نہیں بتانی پڑے گی بلکہ صرف اپنی آمدنی، اخراجات اور مجموعی اثاثوں کی مالیت بتانی ہوگی۔ وہ افراد جن کی آمدنی کا نصف سے ذائد تنخواہ پر مشتمل ہے انکے لئے بہت ہی سادہ طریقہ کار وضع کیا گیا ہے۔

فارم میں درج معلومات کے مطابق اگر صارف واجب ا دا ٹیکس سے ذائد ٹیکس بھرتا ہے تووہ اسے کلیم کرنے کا حقدار ہو تا ہے۔حیات عمر ملک کے مطابق لون یا گفٹ کی صورت میں ہونے والی آمدنی اور اثاثے پر کوئی ٹیکس نہیں ہے۔

ورک شاپ کے اختتام پر کے یو جے دستور کے صدر طارق ابوالحسن، نائب صدر محمد رضوان بھٹی، سیکریٹری انفارمیشن طارق عزیز، پریس کلب کے خازن راجہ کامران اور ورکشاپ کے کوآرڈینیٹر سینئر ممبر کے یو جے محمد علی نے مہمانوں کو روایتی اجرک پیش کی،طارق ابوالحسن نے ایف بی آر کے افسران اور شرکاء کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ تنخواہ دار طبقہ محدود آمدنی اور دیگر پیچیدگیوں کے باعث ٹیکس ریٹرن فائل کرنے کو سنجیدگی سے نہیں لیتا ہے، انہوں نے امید ظاہر کی کہ ورکشاپ کے باعث صحافی اب باآسانی اپنا ٹیکس ریٹرن فائل کر سکیں گے،ورکشاپ کے بعد صحافیوں نے اپنا ٹیکس ریٹرن بھی فائل کیا۔