دورہ آسٹریلیا کیلئے قومی ٹیسٹ اور ٹی 20 اسکواڈ کا اعلان ، سرفراز آئوٹ

241

لاہور(جسارت نیوز )آسٹریلیا کے خلاف 3 ٹی 20 میچز کیلئے 16 رکنی قومی ٹیم کا اعلان کردیا گیا، بابر اعظم قومی ٹی 20 کرکٹ ٹیم کی قیادت کریں گے، ٹیم میں آصف علی، فخر زمان، حارث سہیل، محمد حسنین، افتخار احمد، عماد وسیم، امام الحق، خوشدل شاہ، محمد عرفان، محمد عا مر، محمد رضوان، موسی خان، شاداب خان، عثمان قادر اور وہاب ریاض میں شامل ہیں۔آسٹریلیا کے خلاف 2 ٹیسٹ میچوں کے لیے 16 رکنی قومی ٹیسٹ ٹیم کا بھی اعلان کردیا گیا۔ اظہر علی قومی ٹیسٹ ٹیم کی قیادت کریں گے، دیگر کھلاڑیوں میں بابر اعظم، عابد علی، اسد شفیق، حارث سہیل، افتخار احمد، عمران خان سینئر، امام الحق، کاشف بھٹی، محمد عباس، محمد رضوان، موسی خان، نسیم شاہ، شاہین شاہ آفریدی، شان مسعود اور یاسر شاہ شامل ہیں۔ قومی ٹی 20 اسکواڈ 26 اکتوبر کو سڈنی روانہ ہوگا۔ ٹیسٹ اسکواڈ میں شامل کھلاڑی قائداعظم ٹرافی کے5ویں راؤنڈ میں شرکت کے بعد آسٹریلیا روانہ ہوں گے۔ قومی ٹی 20 ٹیم سیریز سے قبل ایک وارم اپ میچ کھیلے گی۔ٹیسٹ سیریز سے قبل قومی ٹیم 2 وارم اپ میچز بھی کھیلے گی۔ پی سی بی نے ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ میں شامل آئندہ ماہ شیڈول آسٹریلیا کے خلاف سیریز کے لیے16 رکنی قومی ٹیسٹ اسکواڈ کا اعلان کردیا۔ نوجوان فاسٹ بولرزموسیٰ خان اور نسیم شاہ کو قومی اسکواڈ میں شامل کرلیا گیا جبکہ شاہین شاہ آفریدی اور محمد عباس کو قومی ٹیسٹ ٹیم میں برقرار رکھا گیا ہے۔فاسٹ بولر عمران خان سینئر کی قومی ٹیسٹ اسکواڈ میں واپسی ہوئی ہے۔عمران خان سینئر نے پاکستان کی جانب سے اپنا 9واں اور آخری ٹیسٹ میچ آسٹریلیاکے خلاف کھیلا تھا۔ دونوں ٹیموں کے درمیان سڈنی میں ٹیسٹ میچ جنوری 2017 میں کھیلا گیا تھا۔اسلام آباد سے تعلق رکھنے والے 19 سالہ موسیٰ خان 7 فرسٹ کلاس میچوں میں 17 وکٹیں حاصل کرچکے ہیں جبکہ لاہور سے تعلق رکھنے والے 16 سالہ فاسٹ بولر نسیم شاہ نے 5 فرسٹ کلاس میچوں میں 17 وکٹیں حاصل کررکھی ہیں۔ قائداعظم ٹرافی 20-2019 کے 4 میچوں میں موسیٰ خان نے 5 وکٹیں حاصل کیں جبکہ نسیم شاہ نے قائداعظم ٹرافی کے پہلے مرحلے میں 3 میچوں میں 9 وکٹیں حاصل کررکھی ہیں۔145 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گیند کرنے والے دونوں فاسٹ بولرزنے ڈومیسٹک کرکٹ میں اپنی دھاک بٹھارکھی ہے۔ دونوں کھلاڑی گذشتہ کافی عرصے سے قومی جونیئر اسکواڈ کا حصہ ہیں۔فاسٹ بولر موسیٰ خان کو قومی ٹی ٹوئنٹی ٹیم میں بھی شامل کرلیا گیا ہے۔ پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان 3 ٹی ٹوئنٹی میچوں پر مشتمل سیریز نومبر کے آغاز میں شیڈول ہے۔ٹی ٹوئنٹی سیریز کے لیے موسیٰ خان کے علاوہ وہاب ریاض، محمد عامراورمحمد حسنین بھی قومی ٹی ٹوئنٹی اسکواڈ کا حصہ ہیں۔ دراز قد فاسٹ بولر محمد عرفان کی بھی قومی ٹی ٹوئنٹی ٹیم میں واپسی ہوئی ہے۔چیف سلیکٹر مصباح الحق نے دونوں فارمیٹ میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے دیگر کھلاڑیوں کو قومی اسکواڈ میں شامل کیا ہے۔ چیف سلیکٹر نے کہا کہ آئی سی سی ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کو مدنظر رکھتے ہوئے دراز قد فاسٹ بولر محمد عرفان کو قومی اسکواڈ میں شامل کرلیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ فاسٹ بولر محمد عرفان آسٹریلوی کنڈیشنز میں مفید ثابت ہوں گے۔ مصباح الحق نے کہا کہ ڈومیسٹک کرکٹ میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے بلے باز خوشدل شاہ کو قومی ٹی ٹوئنٹی ٹیم میں شامل کیا گیا ہے جبکہ آسٹریلیا میں بگ بیش لیگ کھیلنے والے اسپنر عثمان قادر کی قومی ٹی ٹوئنٹی ٹیم میں شمولیت کا فائدہ شاداب خان کو ہوگا۔ قومی ٹی ٹوئنٹی کپ میں عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کرنے پر آصف علی ٹیم میں جگہ برقرار رکھا گیا ہے۔ افتخار احمد بھی مڈل آرڈر میں ان کی مدد کریں گے۔ کمر کی انجری کا شکار حسن علی ری ہیب پروگرام میں شرکت کررہے ہیں، جس کے باعث ان کا انتخاب نہیں کیا گیا تاہم ڈینگی وائرس سے نجات پانے والے شاہین شاہ آفریدی کو قومی ٹیسٹ ٹیم میں شامل کرلیا گیا ہے۔قومی ٹی ٹوئنٹی ٹیم سیریز میں شرکت کے لیے 26 اکتوبر کو سڈنی روانہ ہوگی جبکہ ٹیسٹ اسکواڈقائداعظم ٹرافی کے5ویں راؤنڈ میں شرکت کے بعد نومبر کے پہلے ہفتے میں پرتھ کے لیے روانہ ہوگا۔ شیڈول کے مطابق 31اکتوبر کو کرکٹ آسٹریلیا الیون کے خلاف ٹی ٹوئنٹی وارم اپ میچ، 3 نومبر کوپہلا ٹی ٹوئنٹی میچ ، 5 نومبر کو دوسرا ٹی ٹوئنٹی میچ 8 نومبر، تیسرا ٹی ٹوئنٹی میچ، 11تا13نومبر کو کھیلا جائے گا جبکہ کرکٹ آسٹریلیا الیون کے خلاف 3 روزہ میچ، 15 تا 16 نومبر، 2 روزہ میچ، 21تا 25نومبر اورپہلا ٹیسٹ میچ 29 نومبر تا 3 دسمبر ، دوسراٹیسٹ میچ (ڈے اینڈ نائٹ) کھیلا جائے گا۔