نیشنل لیبر فیڈریشن مزدور حقوق کیلئے جدوجہد کررہی ہے،اسحاق خان شاہد ایوب

155

رپورٹ:قاضی سراج
نیشنل لیبر فیڈریشن کراچی کے زیر اہتمام NLF کی گولڈن جوبلی کے موقع پر 17 اکتوبر کو ولیکا اسپتال کے باہر مزدوروں کی آگاہی کے لیے کیمپ لگایا گیا جس کے مہمان خصوصی امیر جماعت اسلامی ضلع غربی اسحاق خان تھے۔ اس موقع پر NLF پاکستان کے جنرل سیکرٹری شاہد ایوب، NLF کراچی کے صدر عبدالسلام اور دیگر نے خطاب کیا۔ کیمپ کو این ایل ایف کے بینر اور پرچم سے سجایا گیا تھا۔ این ایل ایف کے حوالے سے ترانے بجائے جارہے تھے۔ NLF کے حوالے سے پمفلٹ اور اسٹیکر مزدوروں میں تقسیم کیے جارہے تھے۔ کیمپ کے اختتام پر این ایل ایف کراچی کے صدر عبدالسلام نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نیشنل لیبر فیڈریشن کے قیام کو 50 سال مکمل ہونا بہت بڑی پیش رفت ہے۔ جماعت اسلامی علاقہ بنارس کے ناظم سید سلطان روم نے کہا کہ نیشنل لیبر فیڈریشن اور جماعت اسلامی ملک میں اسلامی نظام حکومت کو قائم کرنے کی جدوجہد کررہی ہے۔ نیشنل لیبر فیڈریشن پاکستان کے جنرل سیکرٹری شاہد ایوب نے کہا کہ نیشنل لیبر فیڈریشن مزدور حقوق کے لیے جدوجہد کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسلامی نظام حکومت ہی میں مزدوروں کو حقوق اور انصاف ملے گا۔ امیر جماعت اسلامی ضلع غربی اسحاق خان نے کہا کہ نیشنل لیبر فیڈریشن پاکستان کی گولڈن جوبلی خوش آئند بات ہے۔ نیشنل لیبر فیڈریشن نے مزدور حقوق کے لیے زبردست جدوجہد کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مزدور ظلم و ستم کا شکار ہیں۔ مہنگائی عروج پر ہے۔ کارخانے بند ہونے سے بیروزگاری بڑھ رہی ہے۔ حکمرانوں کی تبدیلی سے مزید تباہی آگئی ہے۔ مزدوروں کا زندہ رہنا مشکل ہورہا ہے۔ اسحاق خان نے کہا کہ میں نے خود ٹیکسٹائل ملز میں کام کیا ہے، مجھے معلوم ہے کہ مزدوروں پر ظلم کس طرح ہوتا ہے، کارخانوں میں لیبر قوانین پر عمل نہیں ہوتا، ٹھیکیداری نظام رائج ہونے کی وجہ سے مزدور استحصال کا شکار ہیں، کم از کم اجرت بھی مزدوروں کو نہیں ملتی، لوٹ کھسوٹ کا نظام رائج ہے، علاقہ میں مزدوروں کو پینے کا صاف پانی نہیں ملتا، سڑکیں ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہیں۔ جماعت اسلامی ملک میں اسلامی نظام حکومت کے قیام کے لیے جدوجہد کررہی ہے، اسلامی نظام زندگی میں مزدوروں کو ان کے حقوق مل سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نیشنل لیبر فیڈریشن مزدوروں کے حقوق کے لیے جارحانہ پالیسی بنائے، کارخانوں کے سامنے کیمپ لگائے جائیں، جماعت اسلامی نیشنل لیبر فیڈریشن کی پشت پناہی کرے گی۔ انہوں نے NLF کے رہنما عبدالسلام کی جدوجہد کو خراج تحسین پیش کیا، انہوں نے کہا کہ اگر ضرورت پڑی تو جماعت اسلامی غربی کے دفتر میں نیشنل لیبر فیڈریشن اپنا دفتر قائم کرسکتی ہے۔ پروگرام کے اختتام پر انہوں نے دعا کرائی۔
19 اکتوبر کو این ایل ایف کراچی کے زیر اہتمام گولڈن جوبلی کیمپ سنگر چورنگی پر لگایا گیا۔ اس موقع پر نیشنل لیبر فیڈریشن کے رہنما شاہد ایوب، عبدالسلام، قاسم جمال، محمد خالق عثمانی، امان بادشاہ، مختار قریشی، اشتیاق احمد اور دیگر نے شرکاء سے خطاب کیا۔ پروگرام میں ہمدرد وقف کے رہنما ظہیر احمد خان، پورٹ قاسم مزدور انصاف یونین کے جنرل سیکرٹری محمد علیم اور سینئر نائب صدر سید اظفر، انابیہ ویلفیئر فائونڈیشن کے چیئرمین محمد زبیر طاہر اور صدر EOBI پنشنرز ویلفیئر ایسوسی ایشن کے سینئر نائب صدر اور بیورو چیف ’’ہائی کلاس نیوز‘‘ محمد صلاح صدیقی، PSFCL کے رہنما اسد اللہ، ضلع ملیر کے سماجی کارکن سعید الرحمن قریشی، لوڈز لمیٹڈ کے رہنما احمد حسین، محمد اعجاز، مظاہر القاسم، شیخ ظفر، طارق ضمیر، مشتاق احمد اور اعظم خان، پیکسار کے رہنما فرقان احمد انصاری اور کامران علی لیما، میرٹ پیکیجنگ کے رہنما مسرور احمد، شہادت علی، محمد جاوید، محمد امین، ارشد حسین اور الیاس مرتضیٰ، آدم جی انجینئرنگ کے رہنما نوید احمد اور محمد وجاہت، GSK سائٹ کے رہنما غوث الدین، کورنگی کے سماجی کارکن محمد شاہین اور دیگر نے شرکت کی۔ اس کیمپ میں بھی این ایل ایف کے ترانے سنائے جارہے تھے۔ کیمپ کو مختلف مزدور مسائل پر بینرز سے آویزاں کیا گیا تھا۔ جو مزدور کیمپ میں آرہے تھے ان کو اسٹیکرز دیے جارہے تھے۔ اس موقع پر مزدور رہنما فرقان احمد انصاری اور اسد اللہ نے روزنامہ جسارت کے صفحہ محنت کا پمفلٹ بڑی تعداد میں سنگر چورنگی پر تقسیم کیا۔