کشمیریوں کے حقوق کیلئے ہماری تحریک سمندرکی صورت اختیار کر جائے گی،وزیراعظم

52

وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ کشمیریوں کےحقوق کےلئے ایک تحریک شروع کی جو سمندرکی صورت اختیار کرجائے گی۔

کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے وزیراعظم ہاؤس میں انسانی ہاتھوں کی رنجیر بنائی گئی جس میں صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی، وزیراعظم عمران خان، وفاقی وزراء اور وزیراعظم کے مشیر و معاونین خصوصی سمیت عوام کی بڑی تعداد نے بھی شرکت کی۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ آج کی ریلی کا مقصد کشمیر کے لوگوں کو پیغام دینا ہے کہ پاکستانی قوم کشمیری عوام کے ساتھ کھڑی ہے۔بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر میں 80 لاکھ انسانوں کو 2 ماہ سے زائد عرصے سے بند کیا ہوا ہے، عورتیں، بچے اور بیمار سمیت سب بند ہیں، عالمی میڈیا ہانگ کانگ میں احتجاج کو نمایاں کرکے دکھاتا ہے لیکن کشمیر کی کوریج نہ ہونے کے برابر ہے،ملکوں کے لیے پیسا انسانوں سے زیادہ اہم بن گیا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں ظلم کر رہا ہے لیکن اقوام متحدہ اور یورپی یونین نے کشمیر کے معاملے پر بات نہیں کی۔

انہوں نے کہا کہ انسان کے ہاتھ میں صرف کوشش کرنا ہے،کامیابی اللہ دیتا ہے، ہم سب مظلوم کشمیریوں کے ساتھ کھڑے ہیں، کبھی یورپی یونین اور سلامتی کونسل میں اس طرح بات نہیں ہوئی جیسے اب ہوئی۔

وزیراعظم نے کہا کہ  مجھے یقین ہے کہ کشمیریوں کے حقوق کی تحریک سمندر بن جائے گی، عالمی رہنماؤں کو پہلے مسئلہ کشمیر نہیں معلوم تھا لیکن اب سمجھ آنا شروع ہوگیا ہے،نریندر مودی نے بڑی حماقت کر دی، اپنا آخری پتہ وہ کھیل چکا ہے، نریندر مودی مقبوضہ کشمیر کی عوام کو دبانے میں کبھی کامیاب نہیں ہو گا۔