اردو کو سرکاری زبان قرار دینے کے کیس میں وفاق سے جواب طلب

51

اسلام آباد(آن لائن)اسلام آباد ہائیکورٹ نے اردو کو سرکاری زبان قرار دینے کے معاملے پر وفاق سے دو ہفتے میں جواب طلب
کرلیا۔اسلام آباد ہائیکورٹ میں اردو کو سرکاری زبان قرار دینے پردائر رٹ پٹیشن پر کیس کی سماعت جسٹس عامر فاروق نے کی۔ دوران سماعت جسٹس عامر فاروق نے ڈپٹی اٹارنی جنرل سے استفسار کیا کہ سپریم کورٹ کا فیصلہ موجود ہے اس پر وفاق کا کیا موقف ہے۔ سپریم کورٹ نے آئین کے آرٹیکل 251کے تحت اردو کو سرکاری زبا ن قرار دینے کا حکم دیا ہے۔ ڈپٹی اٹارنی جنرل خالد محمود نے عدالت کو بتایا کہ جو عدالت حکم صادرفرمائے گی وفاق نے عمل کرنا ہے۔ درخواست میں کیبنٹ ڈویژن،اسٹبلشمنٹ ڈویژن اور وزارت قانون کو فریق بنایا گیا ہے۔ سماعت دو ہفتوں کیلیے ملتوی کردی۔
اردو زبان